پاکستان کو تعلقات کے سدھار میں دلچسپی نہیں: راج ناتھ سنگھ

 مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے آج کہا کہ پاکستان ‘ ہندوستان کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے میں دلچسپی نہیں دکھارہاہے۔ انہوں نے جموں و کشمیر میں پڑوسی ملک کی مسلسل جنگ بندی خلاف ورزیوں کا حوالہ دیا۔ انہوں نے یہاں پریس کانفرنس میں کہا کہ پاکستان جنگ بندی خلاف ورزیاں کرتا رہتا ہے۔ اسی کے مدنظر میرا خیال ہے کہ پاکستان ‘ ہندوستان کے ساتھ تعلقات میں سدھار نہیں چاہتا۔ مرکزی وزیر 9 ستمبر سے جموں و کشمیر کے 4 روزہ دورہ پر ہیں۔ انہوںنے کہا کہ ہماری فوج اور بی ایس ایف کرارا جواب دے رہے ہیں۔ ہم ایسے حالات پیدا کردیں گے کہ پاکستان آج نہیں تو کل جنگ بندی خلاف ورزیاں روکنے پر مجبور ہوجائے گا۔ سیکوریٹی جائزہ اجلاسوں کے علاوہ راج ناتھ سنگھ نے گرمائی دارالحکومت سری نگر میں مختلف شعبہ حیات کے وفود سے ملاقات کی۔ بعدازاں انہوںنے جموں کا دورہ شروع کیا۔ جموں میں بھی انہوں نے بات چیت کا سلسلہ جاری رکھا۔ انہیں بی ایس ایف میں شامل کئے جانے والے تازہ آلات کی جانکاری دی گئی۔ مرکز ی وزیر داخلہ نے کہا کہ 2014 سے پاکستان نے ہر سال 400 سے زائد مرتبہ جنگ بندی کی خلاف ورزی کی ہے۔ پاکستان کو اسے روکناہوگا۔ راج ناتھ سنگھ کے ساتھ مرکزی وزیر جتیندر سنگھ اور ڈپٹی چیف منسٹر جموں و کشمیر نرمل سنگھ موجود تھے۔ مرکزی وزیر داخلہ نے حقیقی خط ِ قبضہ پر آباد لوگوں کا دل جیتنے کی کوشش کی جنہیں اپنے مکان اور مویشی چھوڑکر ضلع راجوری کے نوشیرہ سیکٹر میں زائداز 4 ماہ سے کیمپوں میں پناہ لینی پڑی ہے۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ ملک کو سرحد پر آباد عوام پر فخر ہے کیونکہ وہ ہندوستان کا دفاعی اثاثہ ہیں۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ مرکز نے ماہرین کا ایک گروپ قائم کرنے کا فیصلہ کیا ہے جو سرحد پر آباد لوگوں کے مسائل اور انہیں درپیش چیلنجوں کا جائزہ لے گا۔ راج ناتھ سنگھ نے کہا کہ 60 بنکرس تعمیر کئے گئے ہیں اور حکومت نے مزید بنکرس کی تعمیر کا فیصلہ کیا ہے۔ آئی اے این ایس مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے منگل کے دن کہا کہ حکومت ہند نے مائیگرنٹس اور بے دخل کئے گئے لوگوں کے تعلق سے ”انسانی “ رویہ اختیار کیا ہے لیکن وہ غیرقانونی امیگریشن کی سخت مخالف ہے۔

جواب چھوڑیں