ڈی یو ایس یو انتخابات، این ایس یو آئی کی شاندار کامیابی کامیاب امیدواروں کو صدر و نائب کانگریس کی مبارکباد

کانگریس کی طلبہ شاخ نیشنل اسٹوڈنٹس یونین آف انڈیا (این ایس یو آئی) نے شاندار واپسی درج کراتے ہوئے آج دہلی یونیورسٹی طلبہ یونین (ڈی یو ایس یو) کے انتخابات میں 4 کے منجملہ 3 اعلیٰ عہدوں پر قبضہ کرلیا ، جب کہ آر ایس ایس سے ملحقہ اے بی وی پی کو صرف سکریٹری کے عہدہ پر کامیابی حاصل ہوسکی۔ این ایس یو آئی نے صدر ، نائب صدر اور جوائنٹ سکریٹری کے عہدہ پر قبضہ کرلیا ۔ راکی تسید ڈی یو ایس یو کے نئے صدر ہیں ۔ گذشتہ سال اکھل بھارتیہ ودیارتھی پریشد (اے بی وی پی) نے سوائے جوائنٹ سکریٹری کے دیگر تین نشستوں پر کامیابی حاصل کی تھی ، جب کہ این ایس یو آئی نے جوائنٹ سکریٹری کے عہدہ پر کامیابی حاصل کی تھی ۔ کانگریس قائد اجئے ماکن نے ٹوئٹر پر کہا ”مبارک ہو این ایس یو آئی ، آپ نے ڈی یو ایس یو کی 4 نشستوں کے منجملہ 3 نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے ، جن میں صدر کا عہدہ بھی شامل ہے۔ ڈی یو ایس یو کے انتخابات منگل کے روز منعقد ہوئے تھے ، جس میں 51 کالجس کے طلبہ نے حق رائے دہی سے استفادہ کیا تھا۔ سہ رخی مقابلہ میں آر ایس ایس کی حمایت یافتہ اے بی وی پی ، کانگریس کی این ایس یوآئی اور سی پی آئی ایم ایل لبریشن کی یونین اے آئی ایس اے نے حصہ لیا تھا۔ پی ٹی آئی کے بموجب این ایس یو آئی کے راکی تسید نے 1590 ووٹوں کی اکثریت سے صدر کے عہدہ پر کامیابی حاصل کی ، جب کہ پارٹی کے کنال شیراوت نے اے بی وی پی امیدوار کو 175 ووٹوں سے شکست دی

جواب چھوڑیں