کے ٹی آر نے حیدرآباد کو کھنڈر میں تبدیل کردیا : قائد اپوزیشن کونسل محمد علی شبیر

 قائد اپوزیشن قانون ساز کونسل محمد علی شبیر نے حیدرآباد شہر کی حالت زار پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ریاستی وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی آر نے حیدرآباد کی عظمت کو ختم کرتے ہوئے شہر کو کھنڈر میں تبدیل کردیا۔ گریٹر انتخابات سے قبل شہر کو امریکہ کے ڈلاس شہر میں تبدیل کرنے کا وعدہ ہوائی قلعہ میں تبدیل ہوچکا ہے۔ سڑکیں غائب ، ہر طرف گڑھے دکھائی دیں گے۔ ٹرافک جام سے ملازمین دفاتر تاخیر سے آرہے ہیں۔ طلباءتعلیمی اداروں پر وقت پر نہیں پہنچ رہے ہیں۔ ایمرجنسی مریض راستے میں دم توڑ رہے ہیں۔ عوام یہ کہنے پر مجبور ہوگئی کہ ہمیں 2014ءکے قبل کا شہر واپس لوٹا دو۔ انہوں نے کہا کہ کے ٹی آر کا ایوارڈ حاصل کرنا شرم کی بات ہے۔ کس بنیاد پر انہیں ایوارڈ دیاجارہا ہے جبکہ وہ عوام سے کئے گئے کسی وعدے پر عمل آوری نہ کرسکے۔ نہ ہی شہریوں کو بنیادی حقوق دلواسکے۔ معمولی بارش سے شہر کی سڑکیں جھیل میں تبدیل ہورہی ہیں۔ ڈرینیج سسٹم تباہ ہوچکاہے۔ پینے کے پانی کا مسئلہ پیدا ہوگیا۔ عوام آلودہ پانی حاصل کرتے ہوئے وبائی امراض کا شکار ہورہی ہے۔ محمد علی شبیر نے کہا کہ کانگریس نے شہر حیدرآباد کے لئے دو لاکھ کروڑ خرچ کرچکی ہے۔ شہر اس وقت دنیا کے ٹورازم شہر میں شمار کیا جاتا تھا۔ یونیسکو نے حیدرآباد کو خوبصورت شہر قرار دیا تھا۔

جواب چھوڑیں