عام آدمی پارٹی رکن اسمبلی امانت اللہ خاں ضمانت پر رہا

 دہلی چیف سکریٹری انشو پرکاش کو زدوکوب کرنے کے کیس میں ہائیکورٹ نے آج عام آدمی پارٹی (عاپ) رکن اسمبلی امانت اللہ خاں کو ضمانت منظور کی ۔ جسٹس مکتا گپتا نے اوکھلا حلقہ کے رکن اسمبلی جنہیں 21 جنوری کو گرفتار کیا گیا تھا کو عاپ کے دوسرے رکن اسمبلی پرکاش جروال کو قبل ازیں جن شرائط پر ضمانت دی گئی انہیں شرائط پر ضمانت منظور کی ۔ عدالت نے کہا کہ درخواست گزار (امانت اللہ) 20 دن سے زیادہ محروس رہ چکا ہے اور حراست میں مزید پوچھ تاچھ درکار نہیں ، لہٰذا درخواست گذار کو ضمانت پر رہا کیا جارہا ہے۔ ضمانت کے دوران دہلی پولیس کے وکیل استغاثہ نے موقف رپورٹ میں کہا کہ خاں کے خلاف 12 فوجداری مقدمات درج تھے ، جن کے منجملہ تین مقدمات میں انہیں الزاماتِ منسوبہ سے بری کیا گیا ہے۔ عدالت نے 9 مارچ کو عاپ رکن اسمبلی پرکاش جروال کو ایسے ہی مقدمہ میں ضمانت منظور کرتے ہوئے انتباہ دی تھی کہ مستقبل میں ایسی غیرقانونی حرکت سرزد کرنے پر ضمانت منسوخ کردی جائے گی۔ دیولی حلقہ کے رکن اسمبلی جروال کو چیف منسٹر اروند کجریوال کے مکان میں چیف سکریٹری کو زدوکوب کرنے کی پاداش میں 20 فروری کو گرفتار کیا گیا تھا۔ قبل ازیں مجسٹریٹ کی ایک عدالت نے یہ کہتے ہوئے کہ اس کو معمول کا واقعہ قرار نہیں دیا جاسکتا اور انہیں ہسٹری شیٹر قرار دیتے ہوئے درخواست ضمانت کی تھی۔

جواب چھوڑیں