میانمار میں روہنگیاؤں کی زمین پر فوجی تنصیبات

 میانمار ‘ ڈھائے گئے روہنگیا مواضعات کی زمین پر سیکوریٹی تنصیبات تعمیر کررہا ہے۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل نے پیر کے دن یہ اطلاع دی۔ اس نے شبہ ظاہر کیا کہ لاکھوں روہنگیا پناہ گزینوں کی ان کے وطن واپسی ہوپائے گی یا نہیں کچھ نہیں کہا جاسکتا۔ میانمار کی شمالی ریاست رکھائن سے لگ بھگ 7 لاکھ روہنگیا مسلمان بنگلہ دیش میں پناہ لے چکے ہیں۔ روہنگیاؤں پر میانمار میں مظالم کو امریکہ اور اقوام متحدہ نے نسلی تطہیر یا نسلی صفائے کا نام دیا ہے۔ میانمار کو اس اصطلاح پر اعتراض ہے۔ ایمنسٹی کی نئی رپورٹ میں جسے ری میکنگ رکھائن اسٹیٹ کا عنوان دیا گیا ہے‘ سٹیلائٹ تصاویر اور انٹرویوز کے حوالہ سے کہا گیا ہے کہ جاریہ سال کی شروعات سے فوجی تنصیبات اور دیگر تعمیرات تیزی سے بڑھی ہیں۔

جواب چھوڑیں