پی این بی فراڈ:ارون جیٹلی نے اپنی لڑکی کو بچانے خاموشی اختیار کی:راہول گاندھی

کانگریس صدر راہول گاندھی نے پیر کے دن الزام عائد کیا کہ وزیر فینانس ارون جیٹلی 12600 کروڑ کے پی این بی فراڈ کیس میں ’’اپنی وکیل لڑکی کو بچانے‘‘ کے لئے خاموش ہیں۔ راہول نے پوچھا کہ جیٹلی کی لڑکی کی فرم پر ’’دھاوا‘‘ کیو ںنہیں ہوا۔ کانگریس قائد نے ٹویٹ کیا کہ اب پتہ چلا ہے کہ پنجاب نیشنل بینک اسکام پر ہمارے وزیر فینانس کی خاموشی اپنی وکیل لڑکی کو بچانے کے لئے ہے جنہیں ملزم نے اسکام منظرعام پر آنے سے ایک ماہ قبل بڑی رقم دی تھی۔ جب ملزم کی دیگر لا فرمس پر سی بی آئی دھاوے ہوسکتے ہیں تو ارون جیٹلی کی لڑکی کی فرم پر کیوں نہیں؟۔ راہول گاندھی نے ایک نیوز ویب سائٹ دی وائر کی ٹویٹ بھی جوڑی۔ دی وائر نے اپنی سائٹ پر کہا کہ وہ ایک جانکاری پر کام کررہی تھی اور اس نے جیٹلی کی لڑکی اور داماد جیئش بخشی کو سوالنامہ بھیجا تھا۔ بخشی نے توثیق کی کہ دسمبر 2017 میں ریٹینرشپ (کیس لڑنے اڈوانس رقم) ملی تھی لیکن اسے جنوری 2018میں لوٹادیا گیا تھا۔ دسمبر 2017میں چمبرس آف جیٹلی اینڈ بخشی سے مسرز گیتانجلی جیمس لمیٹڈ نے اپنے قانونی اور مشاورتی امور میں ان کی نمائندگی کی گذارش کی تھی تاہم اس سے پہلے کہ کوئی قانونی کام شروع ہوتا‘ میڈیا میں بینک اسکام کی خبر آگئی۔ ہم نے ان کی فیس لوٹادینے کا فیصلہ کیا۔ بانی مدیر ایم کے وینو کے بموجب دی وائر نے اس اسٹوری کو اشاعت کے لائق نہیں سمجھا لیکن بی جے پی کی طرف جھکاؤ رکھنے والی ایک ویب سائٹ نے دعویٰ کردیا کہ دی وائر ‘ جیٹلی کو گھیرنے ایسی اسٹوری پلان کررہی ہے۔ راہول گاندھی نے جن دیگر لا فرمس کا حوالہ دیا ان میں مشہور لا فرم سیرل امرچند منگل داس شامل ہے جس کے ممبئی دفاتر پ سی بی آئی نے دھاوا کیا تھا۔ کہا جاتا ہے کہ اس فرم کو نیرؤ مودی نے اسکام سے ایک ماہ قبل ہائر کیا تھا۔

جواب چھوڑیں