کٹھمنڈو ایرپورٹ پر بنگلہ دیشی طیارہ کو حادثہ‘ 50 ہلاک

ایک بنگلہ دیشی طیارہ جس میں 71 افراد سوار تھے‘ پیر کے دن نیپالی دارالحکومت کٹھمنڈو کے ایرپورٹ پر لینڈنگ کے وقت تباہ ہوگیا ۔ کم ازکم 50 افراد ہلاک ہوگئے۔ عہدیداروں نے یہ بات بتائی۔ یو ایس۔ بنگلہ ایرلائن کا طیارہ ڈھاکہ سے کٹھمنڈو آرہا تھا کہ وہ ایرپورٹ کی باڑھ سے ٹکراکر شعلہ پوش ہوگیا۔ پہاڑوں میں گھرے ایرپورٹ کے جنرل منیجر راج کمار چھیتری نے یہ بات بتائی۔ کٹھمنڈو ایرپورٹ پر پرندے طیاروں سے ٹکراتے رہتے ہیں۔ اس کے علاوہ یہاں دیگر خطرات بھی ہیں ۔ فوج کے ترجمان گوکل بھنڈاری نے بتایا کہ ہم نے تاحال 50 نعشیں برآمد کرلی ہیں۔ بمبارڈیر 0400 سیریز کے طیارہ کے جلتے ملبے سے کئی مسافرین کو بچالیا گیا لیکن ابھی بھی 9 کا پتہ نہیں چل رہا ہے۔ طیارہ تریبھون انٹرنیشنل ایرپورٹ کے ٹارمیک کے قریب شعلہ پوش ہونے کے بعد نزدیک واقع میدان میں گرپڑا۔ ٹارمیک پر سفید چادر سے ڈھکی نعشوں میں کئی جلی ہوئی تھیں۔ عینی شاہدین نے یہ بات بتائی۔ طیارہ سے کثیف دھویں کے بادل اٹھتے دکھائی دیئے۔ بعدازاں تصاویر میں دکھایا گیا کہ آگ بجھادی گئی۔ مقام حادثہ پر فوجی اور بچاؤ کارکن دکھائی دیئے۔ ٹریکنگ ویب سائٹ فلائٹ راڈار 24 ڈاٹ کام کے بموجب طیارہ 17 سال پرانا تھا۔ وہ 4400فیٹ کی بلندی سے نیچے آیا اور پھر 6600 فیٹ بلند ہوا۔ 2 منٹ بعد وہ تباہ ہوگیا۔ پہاڑی ملک نیپال میں
ایر سیفٹی کا ریکارڈ خراب ہے۔ 1992 میں تھائی ایرویز کا طیارہ جو بنکاک سے آرہا تھا‘ کٹھمنڈو ایرپورٹ پر لینڈنگ کے دوران تباہ ہوگیا تھا۔ طیارہ میں سوار تمام افراد ہلاک ہوگئے تھے۔ پی ٹی آئی کے بموجب یو ایس۔ بنگلہ ایرلائنز کا طیارہ آج نیپال کے تریبھون انٹرنیشنل ایرپورٹ پر تباہ ہوگیا۔ اس میں آگ لگ گئی۔ طیارہ میں 67 مسافرین اور 4 ارکان عملہ سوار تھے۔ وہ رن وے سے پھسل گیا تھا اور ایرپورٹ کے قریب واقع فٹبال گراؤنڈ میں جاگرا تھا۔ تریبھون انٹرنیشنل ایرپورٹ کے ترجمان پریم ناتھ ٹھاکر نے یہ بات بتائی۔ ایرپورٹ کے منیجر راج کمار چھیتری نے کہا کہ 50 سے زائد ہلاکتوں کا اندیشہ ہے۔ 20سے زائد زخمیوں کو کٹھمنڈو میڈیکل کالج ہسپتال لے جایا گیا ۔ 7 نعشیں بھی ہسپتال لائی گئیں۔ فلائٹ UBG211 ڈھاکہ سے کٹھمنڈوو آرہی تھی۔ طیارہ نے کٹھمنڈو ایرپورٹ پر مقامی وقت 2:20 بجے دن لینڈنگ کی۔ فٹبال گراؤنڈ سے دھواں اٹھتا دیکھا گیا۔ طیارہ رن وے سے آگے بڑھ گیا تھا۔ وہ ہینگر سے ٹکرانے والا تھا۔ ایک ایرپورٹ عہدیدار کے حوالہ سے ہمالین ٹائمس نے یہ اطلاع دی۔ عہدیداروں کا کہنا ہے کہ فنی خرابی حادثہ کی وجہ ہوسکتی ہے۔ طیارہ کو رن وے کی جنوبی سمت سے لینڈنگ کی اجازت دی گئی تھی لیکن اس نے شمالی جانب سے لینڈنگ کی ۔کٹھمنڈو پوسٹ نے ڈائرکٹر جنرل شہری ہوابازی اتھاریٹی نیپال سنجیو گوتم کے حوالہ سے یہ اطلاع دی۔ گوتم نے کہا کہ رن وے پر لینڈنگ کی کوشش میں طیارہ قابو سے باہر ہوگیا تھا۔

 

جواب چھوڑیں