ضمنی انتخابات کے نتائج بی جے پی پر عوام کی برہمی کے عکاس : راہول گاندھی

کانگریس صدر راہول گاندھی نے آج کہا کہ اتر پردیش اور بہار میں ضمنی انتخابات کے نتائج بی جے پی کے تئیں عوام کی برہمی کی عکاسی کرتے ہیں۔ راہول گاندھی نے ا پنے ایک ٹوئٹر پیام میں کہا ’’ ضمنی انتخابات کے فاتحین کو مبارکباد۔ نتائج سے یہ واضح ہے کہ عوام بی جے پی پر سخت برہم ہیں۔ یہ بھی واضح ہے کہ عوام ایسے غیر بی جے پی امیدواروں کو ووٹ دیں گے جن کے انتخاب میں کامیابی کے سب سے زیادہ امکانات ہوں۔کانگریس امیدواروں کو تیسرا مقام حاصل ہونے سے متعلق سوال پر کانگریس صدر نے کہا کہ کانگریس اترپردیش میں نو نرمان ( تنظیم جدید) کیلئے تیار ہے لیکن یہ عمل راتوں رات نہیں ہوسکتا۔ اسی دوران نئی دہلی سے موصولہ اطلاع کے بموجب شیو سینا رکن پارلیمنٹ سنجے راوت نے آج دعوی کیا کہ سماج وادی پارٹی قائد نریش اگروال کو بھگوا جماعت کی صفوں میں شامل کرنے کی وجہ سے اترپردیش کے دو پارلیمانی حلقوں میں بی جے پی کو شکست اٹھانی پڑی ہے۔ انہوں نے کہا کہ میرے خیال میں ایس پی ۔ بی ایس پی اتحاد کارگر نہیں ہوا ہے ۔ میرا یہ ماننا ہے کہ بھگوان رام ‘ آپ ( بی جے پی )سے اسی دن برہم ہوگئے جب آپ نے ایک ایسے ایس پی قائد کیلئے سرخ قالین بچھایا جس نے بھگوان رام پر تنقید کی تھی۔ کولکتہ سے موصولہ آئی اے این ایس کی اطلاع کے بموجب چیف منسٹر مغربی بنگال ممتا بنرجی نے آج سماج وادی پارٹی قائد اکھلیش یادو ، بی ایس پی سربراہ مایا وتی اور آر جے ڈی قائد لالو پرساد کو لوک سبھا ضمنی انتخابات میں کامیابی پر مبارکباد دی ۔ ترنمول کانگریس قائد نے ٹوئٹر پر کہا ’’شاندار جیت ۔ مایا وتی جی اور اکھلیش جی کو مبارکباد ۔ زوال کا آغاز شروع ہوچکا ہے ۔‘‘ انہوں نے مزید کہا ارریہ اور جہاں آباد نشست پر کامیابی کے لیے لالو پرساد جی کو مبارکباد ۔ یہ ایک شاندار جیت ہے۔ واضح رہے کہ بی ایس پی کی حمایت سے سماج وادی پارٹی نے اترپردیش کی پھول پور اور گورکھپور لوک سبھا نشستوں پر کامیابی حاصل کی ، جب کہ بہار کے ارریہ میں آر جے ڈی امیدوار بی جے پی سے آگے تھے۔

جواب چھوڑیں