سلمان خان کو 5 سال جیل کی سزا ۔جودھپور سنٹرل جیل منتقل

جودھپور کی ایک عدالت نے 2 سیاہ ہرنوں کی ہلاکت کے مقدمہ میں بالی ووڈ سوپر اسٹار سلمان خان کو 5 سال جیل کی سزا سنائی اور انہیں جودھپور سنٹرل جیل بھیج دیا۔ (2 سیاہ ہرنوں کو ہلاک کرنے کا واقعہ ‘ اکتوبر 1998 میں پیش آیا تھا)۔ عدالت نے سلمان خان کے رفقا ء سیف علی خان‘ تبو‘ نیلم اور سونالی بیندرے و نیز ایک مقامی شخص دشینت سنگھ کو ’’شبہ کا فائدہ‘ ‘ دیتے ہوئے بری کردیا۔ وکیل استغاثہ نے یہ بات بتائی۔ عدالت کے احاطہ میں آج مذکورہ فلم اسٹاروں کے مداحوں‘ میڈیا ارکان عملہ اور سیکوریٹی عملہ کا زبردست ہجوم دیکھا گیا۔ فلمی اداکاروں کے مداح‘ عدالت تک پہنچنے والے 2 کیلو میٹر طویل راستہ پر قطار بنائے کھڑے تھے۔ 52 سالہ سلمان خان کو بولیرو پولیس جیپ میں بٹھاکر جیل لے جایا گیا تاکہ وہ آج رات جیل میں گذاریں۔ سلمان خان‘ چوتھی مرتبہ جودھپور سنٹرل جیل میں بھیجے گئے ہیں۔ اس جیل میں مذہبی رہنما آسارام باپو بھی قید ہیں جن پر عصمت ریزی کا الزام ہے۔ جیل کے ذرائع نے بتایا کہ ’’ہندوستان کے کامیاب ترین‘‘ اداکار کو زبردست سیکوریٹی کے تحت جیل کے بیرک نمبر 2 میں رکھا گیا ہے۔ قبل ازیں سلمان خان نے 1998 ‘ 2006 اور 2007 میں جملہ 18 روز‘ جیل میں گذارے تھے۔ غیرقانونی شکار کے مقدمات میں انہیں یہ دن دیکھنے پڑے۔ چونکہ سزا ‘ 3 سال سے زیادہ کی ہے‘ سلمان خان کو ضمانت کے لئے اعلیٰ عدالت سے رجوع ہونا ہے۔ مذکورہ کیس میں قطعی مباحث گذشتہ 18 مارچ کو ہی ‘ تحت کی عدالت میں مکمل ہوچکے تھے اور چیف جوڈیشیل مجسٹریٹ دیو کمار کھتری نے آج کے لئے فیصلہ محفوظ رکھا تھا۔ وکیل استغاثہ مہیپال بشنوئی نے بتایا کہ عدالت نے سلمان خان پر 10 ہزار روپے جرمانہ بھی عائد کیا۔ سلمان کو قانون تحفظات ِ جنگلاتی زندگی کی دفعہ 9/51 کے تحت خاطی پایا گیا۔ تفصیلات کے مطابق سلمان خان نے یکم اکتوبر 1998 کی رات کو جودھپور کے قریب موضع کانکنی میں 2 سیاہ ہرنوں کو گولی مارکر ہلاک کردیا تھا۔ یہ واقعہ‘ فلم ’’ہم ساتھ ساتھ ہیں‘‘ کی شوٹنگ کے دوران پیش آیا تھا۔ سیاہ ہرن‘ ایک ایسا جانور ہے جس کی نسل مفقود ہوتی جارہی ہے۔ مذکورہ رات (یکم نومبر 1988 کی رات ) کو تمام اداکار جپسی گاڑی میں سوار تھے اور سلمان خان‘ ڈرائیونگ کررہے تھے۔ انہوں نے سیاہ ہرنوں کو دیکھ کر گولی چلائی اور انہیں ہلاک کردیا۔ آج جس وقت عدالت میں فیصلہ سنایا گیا‘ اُس وقت تمام ملزمین ‘ کمرہ عدالت میں موجود تھے اور بعض اداکاروں کے ساتھ ان کے ارکان خاندان بھی موجود تھے۔ میڈیا نے اس مقدمہ کے ہر پہلو پر نظر رکھی تھی اور اس طرح یہ کیس ‘ قومی توجہ کا مرکز بن گیا۔ سلمان خان کے لاکھوں مداح‘ سوشیل میڈیا اور ٹی وی پر نظریں جمائے ہوئے تھے تاکہ آج کے فیصلہ کے بارے میں آگہی حاصل کریں۔ تجارتی تجزیہ نگار بھی سلمان خان کے مقدمہ کے حشر کے بارے میں جاننے کے لئے بے چین نظر آرہے تھے۔ سلمان خان کی آنے والی فلموں ’’ریس 3 ‘‘ ’’بھارت‘‘ اور ’’دبنگ 3 ‘‘ سے لگ بھگ 600 کروڑ روپے آمدنی متوقع ہے ۔ تجارتی تجزیہ نگار گریش وانکھیڈے نے بتایا کہ ’’سلمان خان کی تمام فلموں سے ہر فلم (کی نمائش ) سے کم ازکم 200 کروڑ روپے وصول ہوتے ہیں۔ 3 فلموں کے بارے میں پہلے ہی اعلان کیا جاچکا ہے اس لئے تخمیناً 600 کروڑ روپے لگایاگیا۔

جواب چھوڑیں