اسرائیلی طیاروں کی غزہ میں حماس کے ہیڈ کوارٹر پر بمباری

اسرائیلی لڑاکا جٹ طیاروں نے کل فلسطینیوں کی جانب سے سرحدی دراندازی اور بموں کی تنصیب کے جواب میں شمالی غزہ میں حماس کے فوجی ٹھکانوں کو نشانہ بنایا ۔ فوجی ذرائع نے یہ بات بتائی۔ غزہ میں فلسطینی سیکیورٹی ذرائع نے بتایا کہ اسرائیلی حملے القسام بریگیڈکے جبلیہ میں واقع مرکز کو نشانہ بنایاگیا ۔ جس کے نتیجہ میں حماس کا مسلح شعبہ اور بیت لاہیاکے قریب کے کھیتوں کو نقصان پہنچا لیکن کوئی زخمی نہیں ہوا۔ اسرائیلی حملہ سے ایک دن قبل مشتبہ افراد نے شمالی غزہ کی سرحدی باڑھ کو عبور کرتے ہوئے وہاں دھماکو آلے چھوڑ دیئے گئے تھے جن کا بعدازاں فوج نے پتہ چلایا ۔ اسرائیل فضائیہ کے جنگی طیاروں نے غزہ میں حماس کے ہیڈ کوارٹر پر بمباری کرکے مرکزی دفتر کے بڑے حصے کو تباہ کردیا۔ بین الاقوامی خبر رساں ایجنسی کے مطابق اسرائیل کے جنگی طیاروں نے غزہ میں واقع حماس کے ہیڈ کوارٹر پر بمباری کردی۔ بمباری سے حماس کے ہیڈ کوارٹر کے ایک حصے کو نقصان پہنچا تاہم بمباری کے نتیجے میں کسی جانی نقصان کی اطلاع موصول نہیں ہوئی ہے۔فلسطینی میڈیا کے مطابق قابض اسرائیلی فوج نے پیر کی صبح پہلے جنگی ٹینکوں سے غزہ کی جانب گولہ باری کی اور بعد ازاں اسرائیلی فضائیہ کے جنگی طیاروں نے بمباری کی۔ اسرائیلی جارحیت کا مقصد فلسطینی مظاہرین کو منتشر کرنا اور ’ گھر واپسی‘ مہم کو سبوتاڑ کرنا ہے۔ٹائمز آف اسرائیل کے مطابق اسرائیلی ڈیفنس فورس کی جانب سے جاری بیان میں الزام عائد کیا گیا ہے کہ حماس کے چند حامیوں نے اسرائیل سرحد عبور کر کے دو بوتل بم نصب کیے تاکہ فوجی دستوں کو نشانہ بنایا جا سکے لیکن اس سے قبل ہی خفیہ کیمروں نے نشاندہی کردی۔ جس کے جواب میں اسرائیلی طیاروں نے حماس کے ہیڈ کوارٹر پر بمباری کی۔فلسطین پر قابض اسرائیلی فوج کے طیاروں نے پیر کو صبح سویرے غزہ پٹی میں حماس تنظیم کے ٹھکانوں پر دو فضائی حملے کیے تاہم کسی قسم کا جانی نقصان نہیں ہوا۔فلسطینی نیوز ایجنسی (معا) کے مطابق پہلے حملے میں غزہ پٹی کے شمالی قصبے بیت لاہیا میں تنظیم کے ٹھکانے کو نشانہ بنایا گیا جس کے نتیجے میں اس جگہ کو شدید نقصان پہنچا۔بعد ازاں اسرائیلی لڑاکا طیاروں نے جبالیا کیمپ کے مشرق میں حماس کے عسکری ونگ القسام بریگیڈز کے ٹھکانے پر بم باری کی۔ اس کارروائی کے نتیجہ میں بھی صرف مادی نقصان ہوا۔گزشتہ 10 روز میں غزہ پٹی پر یہ اپنی نوعیت کی پہلی اسرائیلی یلغار ہے۔دوسری جانب فلسطینی وزارت صحت کے اعلان کے مطابق جمعے کے روز “یومِ سرزمین” کے موقع پر اسرائیلی فوج کی براہ راست فائرنگ سے زخمی ہونے والا ایک اور فلسطینی پیر کی صبح دم توڑ گیا۔اسرائیلی جنگی طیاروں نے فلسطینی علاقے غزہ کے شمالی حصے میں حماس کے مبینہ ’فوجی ٹھکانوں‘ کو نشانہ بنایا ہے۔ فلسطینی ذرائع کے مطابق جبالیہ میں واقع ’عزالدین القسام بریگیڈ‘ کے ایک ٹھکانے پر حملہ کیا گیا۔ ان کارروائیوں کے نتیجے میں کسی ہلاکت کی کوئی خبر نہیں ملی ہے۔ اسرائیلی حکام نے بتایا ہے کہ یہ کارروائیاں حماس کے اس جنگجو دھڑے کے کارکنوں کی طرف سے سرحدی خلاف ورزی اور اسرائیلی دفاعی ڈھانچے کو نقصان پہنچانے کی کوشش کے جواب میں کی گئی ہے۔ گزشتہ دس دونوں کے دوران اسرائیلی سکیورٹی فورسز کی فائرنگ کے نتیجے میں اکتیس فلسطینی مارے جا چکے ہیں۔

جواب چھوڑیں