ریاست بھر میں جیوتی با پھلے جینتی تقاریب کا اہتمام

ریاست تلنگانہ میں ممتاز سماجی صلاح کار، دانشور اور ادیب جیوتی با پھلے کو ان کی 192 ویں جینتی کے موقع پر زبردست گلہائے عقیدت پیش کیا گیا ۔ حکومت تلنگانہ کی جانب سے ریاست بھر میں جیوتی با پھلے جینتی تقاریب کا اہتمام کیا گیا ۔ شہر کے مشہور ثقافتی مرکز رویندر بھارتی پر جیوتی با پھلے جینتی تقریب منعقد کی گئی جس میں مختلف سیاسی قائدین نے ماضی کے عظیم سماجی جہد کار پھلے کی خدمات کو یاد کیا اور کہا کہ جیوتی با پھلے نے سماجی برائیوں بالخصوص ذات پات پر مبنی برائیوں کے خاتمہ کیلئے زبردست تحریک چلائی تھی ۔ انہوںنے کسانوں اور سماج کے کمزور طبقات کیلئے زبردست جدوجہد کی تھی ۔ ریاست کے مختلف مقامات پر جینتی تقاریب کا اہتمام کیا گیا اور پھلے کے مجسمہ پر پھول چڑھائے گئے ان تقاریب میں ریاستی وزراء اور عوامی نمائندوں کی بڑی تعداد نے پھلے کو گلہائے عقیدت پیش کیا ریاستی وزیر بہبود بی سی طبقات جو گورامنا نے شہر کے عنبر پیٹ علاقہ میں پھلے کے مجسمہ کو پھول کا ہار پہنایا۔ ریاستی وزیر فینانس ایٹالہ راجندر نے کریم نگر میں پھلے کو گلہائے خراج عقیدت پیش کرنے کے بعد کہا کہ اس عظیم سماجی صلاح کار نے کمزور طبقات کے کاز کیلئے زبردست جدوجہد کی تھی ۔ انہوںنے ساوتری بائی جو پھلے کی اہلیہ تھیں، کو بھی بھر پور خراج پیش کیا جنہوںنے خواتین کو بااختیار بنانے کیلئے زبردست جدوجہد کی تھی۔مختلف سماجی تنظیموں نے بھی پھلے جینتی تقاریب کا اہتمام کیا ہے ۔ نرمل میں منعقدہ پروگرام میں ریاستی وزیر امکنہ اے اندرا کرن ریڈی نے شرکت کی اور انہوںنے اپنی تقریر میں عوام پر زور دیا کہ وہ پھلے کے بتائے ہوئے اصولوں پر چلیں۔

جواب چھوڑیں