پردھان منتری کچھ تو بولیں ملک منتظر ہے: راہول گاندھی

 کانگریس صدر اہول گاندھی نے خواتین اور بچوں پر تشدد پر وزیراعظم نریندر مودی کی خاموشی کو آج نشانہ تنقید بنایا اور کہا کہ یہ ناقابل قبول ہے۔ ہندوستان انتظار میں ہے کہ پردھان منتری کچھ بولیں۔ کانگریس صدر نے یہ بات کل رات انڈیا گیٹ تک کانگریس کے نیم شبی مارچ کے ایک دن بعد کہی۔ انہوں نے کہا کہ تقاضہ وقت ہے کہ مودی بیٹی بچاؤ کے اپنے نعرہ پر قائم رہیں۔ ٹویٹر پر وزیراعظم سے راست مخاطب ہوتے ہوئے راہول گاندھی نے پوچھا کہ مملکت ‘ عصمت ریزی اور قتل کے ملزمین کا تحفظ کیوں کررہی ہے؟ ۔ مسٹر پرائم منسٹر آپ کی خاموشی ناقابل قبول ہے۔ خواتین اور بچوں پر بڑھتے تشدد کے بارے میں آپ کیا سوچتے ہیں؟ ملزمین کا تحفظ مملکت کیوں کررہی ہے؟ ہندوستان منتظر ہے۔ راہول نے اسپیک اَپ کا ہیاش ٹیاگ استعمال کرتے ہوئے یہ بات کہی۔ قبل ازیں راہول گاندھی نے ان ہزاروں مردو خواتین کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے لڑکیوں اور عورتوں پر بڑھتے تشدد کے خلاف احتجاج میں ان کا ساتھ دیا۔ کانگریس صدر نے کہا کہ انصاف کی یہ لڑائی رائیگاں نہیں جائے گی۔ کل رات راہول گاندھی ‘ ان کی بہن پرینکا ‘ بہنوئی رابرٹ وڈرا ‘ کئی کانگریس قائدین اور پارٹی ورکرس نے انڈیا گیٹ تک مارچ کیا تھا۔ وہ شمعیں اور پلے کارڈس تھامے ہوئے تھے۔

جواب چھوڑیں