ہندوستان کے 500 میڈلس پورے۔ویٹ لفٹرس کا شاندار مظاہرہ

ہندوستان نے اپنے کھلاڑیوں کے شاندار اور بااثر کھیل کی بدولت 26 گولڈ، 20 سلور اور 20 برانز میڈلس کے بشمول جملہ 66 میڈلس جیت کر گولڈ کوسٹ میں 21 ویں دولت مشترکہ کھیلوں میں اپنی تاریخ کا تیسرا بہترین مظاہرہ کیا۔ ہندستان نے ان 66 میڈلس کے ساتھ دولت مشترکہ کھیلوں کی تاریخ میں 500 میڈلس بھی پورے کرلیے اور یہ کامیابی حاصل کرنے والا وہ پانچواں ملک بن گیا۔ ہندوستان میزبان آسٹریلیا اور انگلینڈ کے بعد تیسرے نمبر پر رہا۔ دولت مشترکہ کھیلوں کی تاریخ میں ہندوستان کے اب جملہ 504 میڈلس ہوگئے ہیں جن میں 181 گولڈ، 175 سلور اور 148 برانز میڈلس شامل ہیں ۔ ہندوستان نے کھیل کے آخری دن اتوار کو 7 میڈلس جیت کر اپنے تمغوں کی مجموعی تعداد کو 66 پہنچا دیا۔ ہندوستان نے ان کھیلوں میں کئی مقابلوں میں اپنا بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ ٹیبل ٹینس کی کامیابی ہر لحاظ سے حیرت انگیز رہی جس میں ہندوستانی کھلاڑیوں نے 3 گولڈ، 2 سلور اور 3 برانز کے بشمول 8 میڈلس جیتے۔ بیاڈمنٹن میں ہندوستان نے 2 گولڈ، 3 سلور اور ایک برانز کے بشمول 6 میڈلس حاصل کئے۔ اتھلیٹکس میں ہندوستان کو ایک سنہری، ایک چاندی اور ایک کانسی کا تمغہ ملا۔ بیاڈمنٹن میں سائنا نے 8 سال پہلے کی دہلی کی کامیابی کو دہرایا۔ انہوں نے ہندوستان کو تاریخی ٹیم گولڈ دلانے کے ساتھ ساتھ خواتین کا سنگلز گولڈ بھی جیتا اور وہ دولت مشترکہ کھیلوں میں 2 بیاڈمنٹن گولڈ میڈلس جیتنے والی پہلی ہندوستانی کھلاڑی بن گئیں۔ کشتی کی علامت پہلوان سشیل کمار نے اپنے ناقدین کو غلط ثابت کرتے ہوئے 74 کیلوگرام زمرہ میں گولڈ میڈل جیتا اور دولت مشترکہ کھیلوں میں خطابی ہیٹ ٹرک مکمل کی۔ ہندوستان کو ان کھیلوں میں اگر سب سے زیادہ مایوس کسی نے کیا تو وہ مینس اور ویمنس ہاکی ٹیمیں رہیں جو فائنل میں نہیں پہنچ سکیں اور برانز میڈلس کے مقابلے بھی ہارگئیں۔ مرد ٹیم نے دہلی اور گلاسگو میں سلور میڈلس جیتے تھے لیکن اس بار اسے برانز میڈل کیلئے ہوئے مقابلہ میں انگلینڈ سے 1۔ 2 سے شکست کا سامنا کرنا پڑا جبکہ خاتون ٹیم کو بھی برانز میڈل مقابلہ میں انگلینڈ کے خلاف ہی شکست اٹھانی پڑی۔ گولڈ کوسٹ کھیلوں میں ہندوستان کے 2 نوجوان نشانے بازوں انیش بھنوالا اور مانو بھاکر کیلئے ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔ ان نشانے بازوں نے اپنی کارکردگی سے ملک کو مستقبل کیلئے پرامید کیا۔ ہریانہ کی 16 سال کی مانو نے خواتین 10 میٹر ایئر پسٹل مقابلے میں تاریخی طلائی جیتا جبکہ ہریانہ کے ہی انیش نے 15 سال کی عمر میں 25 میٹر ریپڈ فائر پسٹل مقابلے میں طلائی تمغہ جیت کر ان کھیلوں میں سب سے نوجوان ہندوستانی طلائی فاتح ہونے کا اعزاز حاصل کرلیا۔

جواب چھوڑیں