امریکی آئین‘ مسلمانوں کو اپنے فرائض کی ادائیگی کی اجازت دیتا ہے: ڈونالڈ ٹرمپ

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی جانب سے رمضان کی آمد کے موقع پر غیر متوقع طور پر ایک خوشگوار پیغام سامنے آیا ہے، جس میں امریکی مسلمانوں کو مخاطب کر کے ان کا کہنا تھا کہ مسلمان، امریکہ میں بغیر کسی حکومتی رکاوٹ کے آزادانہ طور پر رمضان کا فریضہ انجام دے سکتے ہیں۔واضح رہے کہ مسلمانوں کے مقدس مہینے کے موقع پر امریکی صدور کی جانب سے خیرسگالی کے پیغامات دینے کی روایت قائم ہے تاہم اس حوالے سے گزشتہ سال دیئے گئے اپنے پہلے بیان میں ٹرمپ نے دہشت گردی میں اضافہ کا ذکر کر کے امریکی مسلمانوں میں غم و غصہ کی لہر دوڑ گئی تھی، تاہم حالیہ بیان میں انہوں نے کسی قسم کے متنازعہ مسئلہ کے بیان سے گریز کیا۔اس سلسلے میں وہ مسلمانوں کو باور کرانا نہیں بھولے کہ کس طرح امریکی آئین ان کو حاصل مذہبی حقوق کو تحفظ فراہم کرتا ہے۔بیان میں کہا گیا کہ’امریکہ میں ہم سب خوش قسمتی سے ایک ایسے آئین کے تحت رہ رہے ہیں جو مذہبی آزادی فراہم کرتا ہے اور مذہبی فرائض کی ادائیگی کا احترام کرتا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ’ہماراآئین اس بات کی ضمانت دیتا ہے کہ مسلمان رمضان کو اس کی اصل روح کے ساتھ کسی حکومتی رکاوٹ کے بغیر گزاریں، آئین میں دی گئیں ضمانتیں، امریکیوں کو انسانی روح کو گہرائی سے جاننے کے لیے بھی مواقع فراہم کرتی ہیں۔

جواب چھوڑیں