ٹرمپ سے بات چیت منسوخ کردینے شمالی کوریا کی دھمکی

 شمالی کوریا نے چہارشنبہ کے دن دھمکی دی کہ وہ اپنے قائد کِم جونگ اُن اور امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی جون میں بات چیت ترک کردے گا۔ اسے شکایت ہے کہ واشنگٹن‘ نیوکلیر تحدید اسلحہ کے مسئلہ پر اسے ایک کونے میں دھکیل رہا ہے۔ سرکاری کوریا سنٹرل نیوز ایجنسی (کے سی این اے) کے شائع کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ شمالی کوریا اپنے نیوکلیر پروگرام سے یکطرفہ دستبرداری کے عوض امریکہ سے مالی امداد بھی قبول نہیں کرے گا۔ شمالی کوریا کا کہنا ہے کہ ہمیں اپنی معاشی تعمیر نو کے لئے امریکی امداد کی کبھی بھی توقع نہیں رہی اور ہم مستقبل میں ایسی کوئی معاملت نہیں کریں گے۔ امریکہ نے ہمیں کونے میں دھکیلنے کی کوشش کی اور کوئی یکطرفہ تحدید نیوکلیر اسلحہ معاہدہ ہم پر تھوپا تو پھر ہمیں اس قسم کی بات چیت میں کوئی دلچسپی نہیںہوگی اور ہمیں مجوزہ بات چیت پر نظرثانی کرنی پڑے گی۔ جنوبی کوریا کے وزیر خارجہ نے آج امریکی وزیر خارجہ سے فون پر بات چیت کی۔

جواب چھوڑیں