تیونس کی تاریخ میں پہلی مرتبہ خاتون میئر منتخب

تیونس کی ایک اعتدال پسند اسلامی جماعت کی رْکن ایک خاتون کو دارلحکومت تیونس سٹی کا میئر منتخب کر لیا گیا ہے۔ یہ پہلا موقع ہے کہ تیونس میں کسی خاتون کو ایسا کوئی عہدہ ملا ہے۔ مسلم اکثریتی شمالی افریقی ملک تیونس کے دارالحکومت کا نام بھی تیونس ہے۔ تیونس شہر میں میئر کے عہدہ کے انتخابات جیتنے والی 54 سالہ سْعد عبدالرحیم پیشہ کے اعتبار سے فارمسسٹ ہیں۔ انہیں آج منگل کے روز میونسپل کونسل میں ووٹنگ کے دوسرے راؤنڈ کے دوران منتخب کیا گیا۔تیونس میں بلدیاتی انتخابات کا انعقاد رواں برس چھ مئی کو ہوا تھا۔ تاہم آج میونسپل کونسل کے ارکان نے اپنے اپنے شہروں کے میئر منتخب کرنے کے لیے ووٹ ڈالے۔ تیونس بھر میں النہضۃ پارٹی سے تعلق رکھنے والی قریب ایک درجن خواتین نے میئر بننے کے لیے انتخابات میں حصہ لیا تھا تاہم سعاد عبدالرحیم واحد خاتون ہیں جنہیں کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ انہوں نے ملکی صدر کی جماعت کے نامزد کردہ امیدوار کو شکست دی ہے۔

جواب چھوڑیں