ریاست کے آبپاشی پراجکٹوں کیلئے مرکز کی امداد ضروری

تلنگانہ کے وزیر آبپاشی ٹی ہریش رائو نے آج نئی دہلی میں مرکزی وزیر آبی وسائل نتن گڈکری سے ملاقات کی اور گڈکری سے ریاست کے آبپاشی پراجکٹوں کی تعمیر کیلئے مرکزی امداد کے علاوہ رواں مالیاتی سال کے دوران تلنگانہ کیلئے نئے ہائی ویز کی منظوری کی خواہش کی۔ مرکزی وزیر گڈکری کے ساتھ بات چیت کے بعد ہریش رائو نے صحافیوں کو بتایا کہ ان کی نمائندگی پر مرکزی وزیر نے مثبت رد عمل کا اظہار کیا اور اس یقین کا اظہار کیا کہ ریاست کو کافی فنڈس جاری کئے جائیں گے۔ انہوں نے کالیشورم پراجکٹ کیلئے تمام تر کلیرنس دینے پر گڈکری سے اظہار تشکر کیا۔ ریاستی وزیر آبپاشی ہریش رائو نے اس امید کا اظہار کیا کہ بھیما‘ نیلوائی‘ رالے واگو‘ متاڈی واگو اور کمرم بھیم جیسے آبپاشی پراجکٹوں کے جاری کاموں کیلئے مرکز کی جانب سے 50کروڑ تا 60کروڑ روپئے جاری کئے جائیں گے۔ اس سلسلہ میں مرکزی وزیر نے متعلقہ عہدیداروں کو فوری اثر کے ساتھ فنڈس کی اجرائی کی ہدایت دی ہے۔ ٹی ہریش رائو نے نتن گڈکری کو رواں مالیاتی سال 7نئے نیشنل ہائی ویز کی منظوری دینے کی تجویز پیش کی۔ 7نئے ہائی ویز کی منظوری کی تجویز میں سدی پیٹ۔ یلکاتورتی‘ جنگائوں۔ دودیڑا‘ میدک۔یلا ریڈی‘ فقیر آباد۔ بھینسہ‘ سرسلہ۔ کاماریڈی‘ یلی گنڈہ۔تورور‘ اور نرمل۔خانہ پور‘ شامل ہیں۔ انہوں نے پراجکٹوں کو منصوبہ میں شامل کرنے اور فوری ٹنڈر طلب کرنے کی خواہش کی جس پر مرکزی وزیر ٹرانسپورٹ نتن گڈکری نے مثبت اقدامات کرنے کا تیقن دیا۔

جواب چھوڑیں