احتساب عدالت کے فیصلہ کو چیلنج۔ نواز شریف، مریم اور کپتان صفدراسلام آباد ہائی کورٹ سے رجوع

جیل میں بند سابق وزیراعظم نواز شریف، ان کی بیٹی اور داماد نے آج اسلام آباد ہائی کورٹ میں علٰحدہ اپیلیں داخل کیں اور ضمانت پر رہائی چاہی۔ میڈیا نے یہ اطلاع دی۔ 68 سالہ نواز شریف اور ان کی 44 سالہ لڑکی مریم کو لندن سے واپسی پر جمعہ کے دن لاہور میں گرفتارکرکے راولپنڈی کی اڈیالہ جیل میں ڈال دیاگیاتھا۔ احتساب عدالت نے لندن میں 4لکژری فلیٹس کی ملکیت معاملہ میں انہیں کرپشن کا خاطی قراردیاتھا۔ وکیلوں نے 7اپیلیں علٰحدہ علٰحدہ داخل کیں۔ نواز شریف کی طرف سے 3 ‘ مریم کی طرف سے 2اور کپتان صفدر کی طرف سے 2اپیلیں داخل ہوئیں۔ اپیلوں میں ایون فیلڈفیصلہ کے نقائص کو نمایاں کرکے دکھایاگیا ۔ تینوں کو ضمانت پر رہا کرنے کی بھی گذارش کی گئی۔ اڈیالہ جیل میں دیگر 2کیس کی سماعت کے خلاف بھی ایک اپیل کی گئی۔ کیس کو دوسری احتساب عدالت منتقل کرنے کے لئے بھی ایک اپیل داخل ہوئی۔ مریم کے وکیل امجد پرویز نے کہا کہ احتساب عدالت کا فیصلہ قانون کے مغائر ہے۔ ہمارا کیس مضبوط ہے اور ہمیں کچھ راحت ملنے کی امید ہے۔

جواب چھوڑیں