ایمبولنس کا دروازہ نہ کھلنے سے شیر خوار کی موت ۔کمپنی کے خلاف دیکھ بھال میں لاپرواہی کا کیس درج

چھتیس گڑھ میں 108 ایمبولنس خدمات چلانے والی کمپنی سے ایک سینئر عہدیدار کے خلاف ایک شیر خوار کی موت کے سلسلہ میں کیس درج کرلیا گیا ہے ، جو ایمبولنس کا دروازہ نہ کھلنے پر فوت ہوگیا ۔ ’جی وی کے ای ایم آر آئی‘ کے چیف آپریٹنگ آفیسر وکرم سنگھ کے خلاف مدھو پاڑہ پولیس نے کل رات ایک کیس درج کرلیا ۔ رائے پور کے ڈسٹرکٹ چیف میڈیکل اینڈ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر ایس شنڈالیہ نے اس سلسلہ میں شکایت درج کرائی تھی۔ سپرنٹنڈنٹ پولیس سکھ نندن راٹھور نے یہ بات بتائی ۔ جی وی کے ایم آر آئی 2011ء ریاست میں سنجیونی اکسپریس 108 ایمبولنس خدمات چلا رہی ہے۔ سنگھ کے خلاف تعزیراتِ ہند کی دفعہ 336 کے تحت کیس درج کیا گیا۔ مزید تحقیقات جاری ہیں۔ واضح رہے کہ کل ایک ایمبولنس کا دروازہ نہ کھلنے پر علاج میں تاخیر کے سبب ایک ڈھائی ماہ کا بچہ فوت ہوگیا۔ اسے علاج کے لیے مقامی ہاسپٹل لایا گیا تھا۔ سی ایم ایچ او شنڈالیہ نے بتایا کہ ایمبولنس خدمات ہنگامی خدمات میں شمار ہوتی ہیں اور اس سلسلہ میں کسی لاپرواہی کو برداشت نہیں کیا جائے گا۔ شنڈالیہ نے پولیس میں درج کرائی گئی شکایت میں کمپنی پر ایمبولنس گاڑیوں کی دیکھ بھال میں لاپرواہی کا الزام عائد کیا ۔ شیر خوار کے والدین یہاں ایک خانگی ہاسپٹل میں بچہ کی قلب کی سرجری کے لیے بہار کے گیا سے بذریعہ ٹرین یہاں پہنچے تھے۔

جواب چھوڑیں