پاکستان الیکشن کمیشن کا بڑا فیصلہ۔ ’’ووٹ کسے دیا‘‘ پوچھنے پر 3 سال کی سزا

پاکستان میں 25 جولائی کو قومی اور صوبائی انتخابات ہونے ہیں۔ پاکستان الیکشن کمیشن نے اسے لے کر ایک گائڈ لائن جاری کی ہے۔ اس کے تحت اگر ووٹنگ کے بعد کوئی کسی سے پوچھتا ہے کہ اس نے کسے ووٹ دیا؟ تو متعلقہ شخص کو تین سال کی جیل ہوسکتی ہے یا اسے ایک لاکھ روپئے تک کا جرمانہ ادا کرنا پڑ سکتا ہے۔ اگر قسمت خراب رہی تو جیل اور جرمانہ دونوں ہی ادا کرنا پڑ سکتا ہے۔پاکستانی انگریزی اخبار “ڈان” نے اپنی ایک رپورٹ میں یہ اطلاع دی ہے۔ رپورٹ کے مطابق پاکستان کیالیکشن کمیشن کی طرف سے جاری نوٹیفکیشن میں ایسے کئی نکات ہیں، جن پر پابندی لگائی گئی ہے۔ اگر کوئی پابندی کے خلاف کام کرتا ہے، تو اسے کوڈ آف کنڈکٹ (ضابطہ اخلاق) کی خلاف ورزی تسلیم کی جائے گی۔ اس کے بعد متعلقہ شخص کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔اخبار کے مطابق پابندی عائد کئے گئے کاموں میں سے کسی سے یہ پوچھنا بھی شامل ہے کہ اس نے الیکشن میں کسے ووٹ دیا بیلٹ پیپر کا فوٹو لینا بھی جرم تسلیم کیاجائے گا۔

جواب چھوڑیں