جیل میں قید پادریوں کی درخواست ضمانت مسترد

 یہاں ایک مجسٹریل کورٹ نے ملنکارا آرتھوڈک چرچ کے پادریوں کو جو ایک خاتون کی جنسی اہانت کے کیس میں جیل میں ہیں انہیں ضمانت دینے سے انکار کردیا۔ کیرالا کے ماخوذ 4 پادریوں نے فادر جاب میتھیو اور فادر جانسن وی میتھیو جنہیں پچھلے ہفتہ گرفتار کیاگیاتھا وہ ضمانت کیلئے تروولا مجسٹریٹ کورٹ سے رجوع ہوئے تھے، یہ دونوں پتنم تیتھا کی ڈسٹرکٹ جیل میں قید ہیں۔ ایک خاتون جو باقاعدہ طور پر اس چرچ پر آتی تھی اس نے الزام عائد کیا کہ پچھلے ایک دہے سے ماخوذ 5 پادری ان کی جنسی اہانت کرتے رہے ہیں۔ اس کے شوہرنے شکایت کی کہ وہ کم از کم 5 پادریوں کے دباؤ میں تھی۔ پہلے ایک پادری نے اس کی بیوی کا استحصال کیاتھا اور پھر اسے بلیک میل کرنا شروع کیا۔ جب اس نے دوسرے پادری سے مدد چاہی تو اس نے بھی اسے دھمکایا اور اپنے ساتھی پادری کے ساتھ اس کا جنسی استحصال کیا اس طرح وہ 5 پادریوں کی جنسی اہانت کا نشانہ بنی۔ نیشنل کمیشن برائے خواتین اس کیس کی نگرانی کررہی ہے۔ ایک پادری اس کارروائی میں بچ گیا کیونکہ متاثرہ خاتون نے صرف 4 پادریوں کے نام لئے۔ دوسرے دو پادری فادر سونی (ابراہم ورگھیز) اور فادر جیسے کے جارج جو مفرور ہیں ان کی درخواست ضمانت کی سماعت آج سپریم کورٹ میں کی جارہی ہے۔

جواب چھوڑیں