ایران کے ساتھ ’حقیقی‘ سمجھوتہ کے دروازے کھلے ہیں: ٹرمپ

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ ایران کی جانب سے جوہری ہتھیاروں کے حصول کی کوششیں ترک کرنے کی حقیقی یقین دہانی پر تہران کے ساتھ دیرپا معاہدہ کیا جا سکتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ایران کے ساتھ مذاکرات کے دروازے کھلے ہیں بشرطیکہ تہران جوہری ہتھیاروں کے حصول کی کوششیں ترک کر دے۔امریکی صدر کی طرف سے ایران کے بارے میں ’لچک دار‘ بیان دو روز قبل ہونے والی ’ٹویٹر‘ کشیدگی کے بعد سامنے آیا ہے۔ پچھلے دو دنوں میں دونوں ملکوں کی قیادت نے ایک دوسرے کے خلاف سخت الفاظ پر مشتمل دھمکیاں دی تھیں جس کے نتیجے میں تہران اور واشنگٹن میں کشیدگی مزید بڑھ گئی تھی۔کنساس میں ایک تقریب سے خطاب میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ ’ہم دیکھ لیں گے کہ آگے کیا ہوتا ہے مگر ہم ایران کے ساتھ حقیقی سمجھوتے کے لیے تیار ہیں۔ ماضی جیسا سمجھوتا نہیں جس نے ایک نیا المیہ پیدا کردیا تھا‘۔سوموار کے روز ایران نے امریکی وارننگ مسترد کرتے ہوئے امریکا کو سنگین نتائج کی دھمکیاں دی تھیں، جبکہ امریکی حکومت نے ایران کو تاریخ کے خوفناک انجام سے دوچار کرنے کی دھمکی دے کر ڈرانے کی کوشش کی تھی۔کل امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کہا تھا کہ ایرانی رجیم پوری دنیا بالخصوص یورپ میں تکالیف، دہشت گردی اور موت کا سب سے بڑا سبب ہے۔

جواب چھوڑیں