عمران خان ‘عوام کی موجودگی میں وزارت عظمیٰ کا حلف لینے کے خواہاں

پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ اور پاکستان کے متوقع وزیراعظم عمران خان نے ایوان صدر کے بجائیعوام کیدرمیان حلف اٹھانے کی خواہش کا اظہار کردیا۔25جولائی کوہونیوالے عام انتخابات کینتیجے میں پاکستان تحریک انصاف قومی اسمبلی کی 115 نشستوں کے ساتھ سب سے آگے رہی ہے اورمرکز میں حکومت بنانے کی پوزیشن میں آگئی ہے جس کے بعد پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان پاکستان کے اگلے وزیر اعظم ہوں گے۔وزارت عظمیٰ کا حلف ایوان صدر میں لیاجاتا ہے اور صدر مملکت نومنتخب وزیر اعظم سے ان کے عہدے کاحلف لیتے ہیں، تاہم چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نئی مثال قائم کرنے کے خواہشمند ہیں۔ عمران خان نے وزارت عظمیٰ کا حلف ایوان صدر میں نہیں بلکہ عوام کے درمیان اٹھانے کی خواہش کا اظہار کیا ہے۔ذرائع کے مطابق تحریک انصاف کی مرکزی قیادت نے عمران خان کی اس تجویز کی حمایت کی ہے، تاہم عمران خان وزارت عظمیٰ کا حلف کہاں اٹھائیں گے اس بات کا تاحال فیصلہ نہیں ہوسکاہے۔ ذرائع کے مطابق عمران خان اسلام آباد کے مشہور ڈی چوک پر حلف اٹھاسکتے ہیں جب کہ پریڈ گراؤنڈ سمیت دیگر آپشنز بھی زیرغور ہیں۔یو این آئی کے بموجب پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) پارٹی کے پاکستان میں حکومت بنانے کے لئے اعداد و شمار جمع کرنے کے پختہ مہم کے درمیان سال 1992 میں ملک کے لئے کرکٹ ورلڈ کپ جیتنے والے سابق کپتان اور پارٹی سربراہ عمران خان کی شاندار تاجپوشی کی تیاریا ں زوروں پرہے۔مسٹر خان کے اہم ترجمان نعیم الحسن نے اتوار کو ٹویٹ کیاکہ عمران خان کی خواہش ہے کہ ملک کے نئے وزیر اعظم کی تاج?پوش? کے پروگرام میں زیادہ سے زیادہ لوگ شرکت کریں۔ اس پروگرام کا انعقاد شاید یہاں کیکے ڈی چوک کے علاقے میں ہو گا جہاں ہزاروں کی تعداد میں لوگ شامل ہو سکیں گے۔اس دوران تحریک انصاف کے لوگ حکومت بنانے کے لئے ضروری اعداد و شمار جمع کرنے کے لئے آزاد امیدواراور دیگر جماعتوں کے فاتح امیدواروں سے ملاقات کر رہے ہیں۔’ڈان‘ کی رپورٹ کے مطابق مسٹر خان نے گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کی اہم رول اداکرنیوالے ممتاز بھٹو سے ملاقات کر کے اتحاد میں شامل ہونے کیلئیباقاعدہ دعوت نامہ دیا ہے۔پی ٹی آئی کے سابق سیکریٹری جہانگیر ترین نیا?زادامیدواراور متحدہ قومی مومنٹ پا?ستان (ایم کیو ایم-پی) سے رابطہ کر کے ان سے اتحاد میں شامل ہونے کی اپیل کی ہے۔ ایم کیو ایم-پی نے چھ سیٹوں پر کامیابی حاصل کی ہے جبکہ 13 آزادامیدواروں کو اس انتخاب میں کامیابی ملی ہے۔قابل ذکر ہے کہ پی ٹی آئی کو 115 سیٹیں ملی ہیں اور سابق وزیر اعظم نواز شریف کی پاکستان مسلم لیگ(ن) کی جھولی میں 64 سیٹیں گئی ہیں۔ مسٹر بلاول کی قیادت والی پاکستان پیپلز پارٹی 43 سیٹوں پر فتحیاب ہوئی ہے۔

جواب چھوڑیں