کے سی آر کی آمرانہ حکمرانی کاعنقریب خاتمہ:وی ہنمنت راو

سینئرکانگریس قائد وی ہنمنت رائو نے کہاکہ ریاست میں عنقریب کے سی آر کی آمرانہ حکمرانی کا خاتمہ ہوجائے گا۔ آج یہاں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ ریاست کے تمام طبقات ٹی آرایس کی بدترین حکمرانی سے ناراض ہیں ‘جن مقاصد کے لئے علحدہ ریاست تلنگانہ کے لئے جدوجہدکی گئی تھی وہ رائیگاںجاتی نظر آرہی ہے۔بی سی طبقہ کے ساتھ شدید ناانصافی کی جارہی ہے ۔کسان طبقہ قدم قدم پر ناانصافیوںکاسامناکررہا ہے ۔ دوسری طرف حکومت خوشنماء وعدوںکے ذریعہ عوام کو بہلانے میں مصروف ہے ۔ بی سی طبقہ کی مردم شماری کے فیصلہ پربرہمی ظاہر کرتے ہوئے وی ہنمنت رائو نے کہاکہ حکومت کے پاس مکمل سروے کی تفصیلات موجود ہے ۔ اس کے باوجود وقت گذاری کے لئے بی سی مردم شماری کا ڈھونگ رچاجارہاہے ۔ کانگریس قائد نے کہاکہ ریاست کی صورتحال اتنی خراب ہوچکی ہے کہ عوام کسی بھی وقت ریاستی حکومت کے خلاف اعلان بغاوت کرسکتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ اگرعوام حکومت کے خلاف پرچم بغاوت بلندکرتے ہیں تو کانگریس پارٹی کی جانب سے عوام کابھرپور ساتھ دیا جائے گا۔ کانگریس پارٹی میں جاری داخلی کشمکش کے موضوع پر تبصرہ کرتے ہوئے وی ہنمنت رائو نے کہاکہ کانگریس حقیقی معنوںمیں جمہوری اصولوںپرچلنے والی پارٹی ہے ۔ انہوں نے پارٹی ہائی کمان سے اپیل کی کہ فوری پبلسٹی کمیٹی کے لئے چیرمین کے نام کااعلان کرے ۔ 2019اسمبلی انتخابات میں کانگریس کی کامیابی کی صورت میں چیف منسٹرکون ہوگا ‘اس سے متعلق سوال پرہنمنت رائو نے کہاکہ چیف منسٹرکے نام کافیصلہ کانگریس ہائی کمان کی ذمہ داری ہے ۔انہوںنے مزیدکہاکہ وہ پارٹی کی کامیابی کے لئے سچے سپاہی کی طرح کام کرتے رہیں گے ۔ بونال جلوس کے دوران جوگنی شیاملہ کی جانب سے ٹی آرایس حکومت کے خلاف کی گئی پیش قیاسی کوہنمنت رائو نے صدفیصد سچ قراردیا۔

جواب چھوڑیں