اننت پور میں باپ نے تین بچوں کو دریا میں پھینک دیا

بیوی سے لڑائی جھگڑے کے بعد ایک شخص نے اپنے بچوں کو دریا میں پھینک دیا جس کے سبب یہ تینوں ہلاک ہوگئے۔ دل دہلا دینے والا یہ واقعہ ریاست آندھراپردیش کے ضلع چتور میں پیش آیا۔ پولیس کے مطابق دریائے نیوا میں تین بچوں کی نعشیں تیرتی ہوئی پائی گئیں۔ ان بچوں کی شناخت 6سالہ پونیت‘ 3سالہ سنجے اور 3ماہ کا شیرخوار راہول کی حیثیت سے کی گئی ہے۔ وینکٹیشورلو نے جو ٹرک ڈرائیور بتایا جاتا ہے‘ دوسری بیوی امراوتی سے جھگڑے کے بعد تین بچوں کو دریا میں پھینک کر ہلاک کردیا۔ پہلی بیوی سے اولاد نہ ہونے پر اس نے سات سال قبل امراوتی سے دوسری شادی کی تھی۔ عادی شرابی وینکٹیشورلو کا دوسری بیوی امراوتی سے اکثر جھگڑا ہوتا تھا۔ چند دن قبل لڑائی جھگڑے کے بعد امراوتی اپنے والدین کے گائوں دگووالی پلی چلی گئی تاہم وینکٹیشورلو نے اتوار کو اس کے گھر گیا تاکہ مناکر اس کو اپنے ساتھ لے آسکے۔ امراوتی نے پولیس کو بتایا کہ وہ‘ اس کے ساتھ جانے کیلئے تیار نہیں ہوئی جس پر اس کی شوہر سے بحث وتکرار بھی ہوئی۔ تاہم وینکٹیشورلو نے مجھے چھوڑ کر بچوں کو ا پنے ساتھ لے گیا اور راستہ میں اس نے اتوار کو مبینہ طورپر تین بچوں کو دریا میں پھینک دیا۔ پولیس‘ وینکٹیشورلو کی تلاش کر رہی ہے۔

جواب چھوڑیں