نائب صدرنشین راجیہ سبھا کے عہدہ کیلئے ہری ونش‘ این ڈی اے کے امکانی امیدوار

راجیہ سبھا کے نائب صدرنشین کے عہدہ کیلئے این ڈی اے اور اپوزیشن کے درمیان ایک قریبی مقابلہ کا امکان غالب نظر آتا ہے۔ آئندہ 9اگست کو ہونے والے اِس انتخاب کیلئے جنتا دل (یو) کے رکن پارلیمنٹ ہری ونش‘ حکمراں اتحاد کے امیدوار کی حیثیت سے اُبھررہے ہیں ۔ ایوان بالا میں اپوزیشن کی تعداد ہمیشہ ہی‘ حکمراں اتحاد کے ارکان سے بڑھ کررہی ہے لیکن بی جے پی کو امید ہے کہ وہ علاقائی پارٹیوں جیسے انا ڈی ایم کے‘ بیجو جنتا دل‘ ٹی آر ایس اور وائی ایس آر کانگریس کی تائید حاصل کرسکتی ہے اور اپنے حریفوں کے مقابلہ میں بہتر مقابلہ کرسکتی ہے۔ مذکورہ 4جماعتوں نے این ڈی اے کی کبھی کبھار تائید کی ہے۔ اسی دوران اپوزیشن جماعتوں جیسے کانگریس‘ ٹی ایم سی‘ سماج وادی پارٹی‘ بی ایس پی اور بائیں بازو جماعتوں نے اپنے امیدوار کے انتخاب کے سلسلہ میں مذاکرات کئے ہیں اور یہ واضح کردیا کہ مذکورہ عہدہ کیلئے مقابلہ کیا جائے گا۔ صدرنشین راجیہ سبھا وینکیا نائیڈو نے ایوان میں اعلان کیا کہ نائب صدرنشین کے عہدہ کیلئے انتخاب 9اگست کو صبح 11بجے ہوگا۔ اُنہوںنے یہ بھی تجویز پیش کی کہ نائب صدرنشین کا انتخاب‘ اتفاق رائے سے ہونا چاہئے۔ پرچہ جات نامزدگی ‘ 8اگست کو دوپہر سے قبل داخل کرنے ہوں گے۔ یہاں یہ تذکرہ بیجانہ ہوگا کہ گذشتہ جون میں پی جے کورین کے ریٹائرمنٹ کے بعد سے نائب صدرنشین راجیہ سبھا کا عہدہ خالی ہے۔ کورین‘ ایوان بالا کیلئے کانگریس کے ٹکٹ پر کیرالا سے منتخب ہوئے تھے۔ بی جے پی زیر قیادت این ڈی اے نے ابھی کوئی رسمی اعلان نہیں کیا ہے۔ تاہم باخبر ذرائع نے بتایاکہ ہری ونش ‘ جو پہلی بار رکن پارلیمنٹ بنے ہیں‘ امکان ہے کہ این ڈی اے کے امیدوار ہوں گے۔

جواب چھوڑیں