سری نگر میں انکاؤنٹر‘ کانسٹبل ہلاک‘2 عسکریت پسند گرفتار

بٹمالو علاقہ میں آج عسکریت پسندوں کے ساتھ انکاؤنٹر میں ایک پولیس ملازم ہلاک اور 5 دیگر جوان زخمی ہوگئے۔ 2 عسکریت پسندگرفتارکئے گئے۔ پولیس نے یہ بات بتائی۔ سیکیوریٹی فورس نے سری نگر شہر کے بٹمالو میں دیاروانی میں صبح کارڈن سرچ آپریشن (علاقہ کی گھیر کرتلاشی) شروع کیاتھا کیونکہ علاقہ میں عسکریت پسندوں کی موجودگی کی جانکاری ملی تھی۔ ایڈیشنل ڈائرکٹر جنرل پولیس(سیکیوریٹی‘ لاء اینڈ آرڈر) منیرخان نے یہ بات بتائی۔ انہوں نے کہا کہ مکان کو گھیرتے ہی اندر چھپے عسکریت پسندوں نے فائرنگ کردی۔ اس طرح انکاؤنٹر شروع ہوگیا۔ عسکریت پسندوں نے گرینیڈ(ہتھ گولہ) پھینکا اور تاریکی کے باعث بچ نکلے۔ علاقہ بے حد تنگ ہے اورفورسس نے تحمل سے کام لیا تاکہ زیادہ نقصان نہ ہو کیونکہ مکانات ایک دوسرے سے جڑے ہوئے ہیں۔ منیر خان نے بتایاکہ سلکشن گریڈکانسٹبل پرویزاحمد ہلاک ہوا اور پولیس کے 2اور سی آرپی ایف کے 3جوان زخمی ہوئے۔ پتہ چلا ہے کہ 2 عسکریت پسند جوابی کاروائی میں زخمی ہوئے لیکن بچ نکلے۔ دیگر 2عسکریت پسندوں کو پکڑلیاگیا اور ان سے پوچھ تاچھ میں کئی باتوں کا پتہ چلا ہے جو فی الحال ظاہر نہیں کی جاسکتیں۔آئی اے این ایس کے بموجب جو دو عسکریت پسند گرفتار ہوئے وہ اوور گراؤنڈ ورکرس ہیں۔ سیکیوریٹی فورسیس کو کوئی ہتھیار نہیں ملا۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ عسکریت پسند بچ نکلے۔ جو شہری زخمی ہوا وہ اس مکان کا مالک بتایاجاتا ہے جہاں عسکریت پسند چھپے ہوئے تھے۔ فائرنگ کا تبادلہ لگ بھگ 5گھنٹے جاری رہا۔ احتیاطی اقدام کے طور پرحکام نے موبائیل انٹرنیٹ سرویس پانچ گھنٹے معطل کردی۔

جواب چھوڑیں