غیر قانونی بنگلہ دیشیوں کو ملک میں رہنے کی اجازت نہیں دی جائے گی:امیت شاہ

صدربی جے پی امیت شاہ نے آج پرزور الفاظ میں کہا کہ غیر قانونی طور پر سکونت پذیر بنگلہ دیشیوں کو ملک میں رہنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ امیت شاہ نے جو پارٹی کارکنوں کے اجلاس سے خطاب کیلئے شہر آئے ہوئے تھے اپنے اس یقین کا اظہار کیا کہ اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد کے قیام پر بھی آئندہ عام انتخابات میں بی جے پی فاتح رہے گی۔بتایا جاتا ہے کہ انہوں نے پارٹی کارکنوں سے کہا ’’ہم غیر قانونی بنگلہ دیشی مداخلت کاروں کو ملک میں رہنے کی اجازت نہیں دیں گے۔ اگرچیکہ ہماری جانب سے اس بات کو یقینی بنانے کی کوششیں کی جائیں گی کہ پناہ گزینوں کو جو پناہ حاصل کرنے کیلئے آئے ہیں شہریت دے دی جائے‘‘۔ جبکہ صحیفہ نگاروں کو اجلاس میں شرکت کی اجازت نہیں دی گئی سینئر بی جے پی لیڈربھوپیندر یادو اور پارٹی کے اترپردیش یونٹ کے سربراہ مہندر ناتھ پانڈے نے پارٹی کارکنوں سے شاہ کے خطاب کی تفصیلات بتائی۔ ان دونوں قائدین کے بموجب شاہ نے کہا کہ بی جے پی ملک میں رہنے والے ہندوئوں کے ساتھ ہی ساتھ مسلمانوں کے تعلق سے فکر مند ہے۔ شاہ نے پارٹی کارکنوں پر زور دیا کہ وہ مودی اور یوگی حکومتوں کی جانب سے نچلی سطح پر کئے جانے والے ترقیاتی کام کے بارے میں شعور پیدا کریں اور وضاحت کی کہ اگر ایسا نہیں کیا گیا آئندہ انتخابات میں زعفرانی جماعت کی کامیابی یقینی نہیں رہے گی اور پارٹی کارکنوں کو یہ سمجھ لینا نہیں چاہئے کہ ’’جیت ہماری ہوگی‘‘۔

جواب چھوڑیں