نوبل انعام یافتہ وی ایس نیئپال ‘چل بسے

نوبل انعام یافتہ ادیب وی ایس نیئپال جو سامراجیت‘ مذہب اور سیاست پر اپنی ناقدانہ تحریروں کیلئے جانے جاتے تھے 85 برس کی عمر میں چل بسے۔ ان کے خاندان نے آج صبح یہ بات بتائی۔ ان کی بیوی لیڈی نادرہ نیئپال نے ایک بیان میں کہا کہ وہ بھرپور زندگی جی کر اس دنیا سے گئے۔ نیئپال نے فکشن اور نان فکشن میں 30 سے زائد کتابیں لکھی تھیں۔ ان کی انتہائی مشہور ناول اے ہاؤز فار مسٹربشواس 1961 میں شائع ہوئی تھی۔ انہیں کئی ایوارڈ ملے تھے۔ 2001 میں انہیں نوبل پرائز برائے ادب دیاگیاتھا۔ سرودیا دھرسورج پرساد نیئپال 17اگست 1932 کو ٹرینیڈاڈ میں ایک ہندو خاندان میں پیدا ہوئے تھے۔ وہ آکسفورڈ یونیورسٹی اسکالرشپ ملنے پر18برس میں برطانیہ آگئے تھے اور یہیں کے ہوکر رہ گئے تھے۔انہوں نے دنیا کے کئی ممالک کا سفرکیاتھا۔ 1955 میں انہوں نے پتریشیا این ہیل سے شادی کی تھی ۔اس خاتون کی 1996میں موت کے بعد انہوں نے مطلقہ پاکستانی صحافی نادرہ خانم علوی سے شادی کی تھی۔ اسی دوران مختلف سیاسی قائدین نے وی ایس نیئپال کے گذرجانے پر اظہارتعزیت کیا۔ وزیراعظم مودی نے کہا کہ یہ دنیائے ادب کا بڑا نقصان ہے۔صدرجمہوریہ رام ناتھ کووند ‘چیف منسٹر مدھیہ پردیش شیوراج سنگھ چوہان، کانگریس ترجمان رندیپ سنگھ سرجے والا، چیف منسٹر اوڈیشہ نوین پٹنائک اور چیف منسٹر راجستھان وسندھراراجے سندھیا نے بھی اظہارتعزیت کیا۔ (مربوط خبر صفحہ 3پر)

جواب چھوڑیں