ممتا کے شگاگو پروگرام کو رد کرنے کیلئے آر ایس ایس اور بی جے پی کا دبائو تھا:ترنمول

بھارتیہ جنتا پارٹی اور آر ایس ایس پر سخت تنقید کرتے ہوئے ترنمول کانگریس نے آج الزام عائد کیا ہے کہ سوامی وویکانند کے عالمی مذاہب کانفرنس میں خطاب کو 125سال مکمل ہونے پرشگاگو میں منعقدہ پروگرام میں ممتا بنرجی کی شرکت کو منسوخ کرنے کیلئے آرگنائزوں پر دباؤ بنایا گیا تھا ۔خیال رہے کہ اس کانفرنس میں چیف منسٹر ممتا بنرجی کو مدعو کیا گیا تھا۔ترنمول کانگریس نے الزام عائد کیا ہے کہ بی جے پی اور آر ایس ایس اس موقع پر شگاگو یونیورسٹی میں صرف ایک پروگرام کے انعقاد کی کوشش کررہی تھی۔وی ویکانند ویدانتا سوسائٹی نے شگاگو میں پروگرام کی شرکت کیلئے مدعو کیا تھا۔ممتا بنرجی بھی اس پروگرام میں شریک ہونے کیلئے تیار تھیں۔مگر دباؤ کے بعد آرگنائزروں نے اس پروگرام کو رد کردیا ۔کیوں کہ آر ایس ایس اور بی جے پی چاہتی تھی کہ اس موقع پر گلوبل ہندو کانفرنس کے علاو ہ کسی اور پروگرام کا انعقاد نہ ہو۔شگاگو میں منعقدہ اس پروگرام میں موہن بھاگوت شریک تھے ۔ترنمول کانگریس کے ترجمان ڈیریک اوبرائن نے کہا کہ وزارت خارجہ کا بیان افسوسناک تھا ۔چیف منسٹر نے کہا کہ میں بھی شگاگو جانے تیار ہوں ۔ لیکن میں ناپاک سازش کی وجہ سے میں اس پروگرام میں نہیں جاسکی ۔مجھے اس کی تکلیف ہوئی ہے ۔وزارت خارجہ نے کل ممتا بنرجی کے اس بیان کو خارج کردیا تھا کہ ممتا بنرجی کو اجازت نہیں دی گئی تھی ۔وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ حکومت کو ممتا بنرجی کے سفر کیلئے کوئی درخواست نہیں آئی تھی ۔

جواب چھوڑیں