ہم خیال جماعتوں سے مفاہمت ، پارٹی ہائی کمان فیصلہ کرے گی:اتم کمار ریڈی

پردیش کانگریس تلنگانہ این اتم کمار ریڈی نے آج اس یقین کا اظہار کیا کہ تلنگانہ میں منعقد شدنی اسمبلی انتخابات میں کانگریس پارٹی کامیابی حاصل کرتے ہوئے اقتدار پر واپس آئے گی ۔ وہ آج نئی دہلی میں صدر کانگریس راہول گاندھی سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کررہے تھے ۔ تقریباً3گھنٹہ تک جاری اس ملاقات میں ریاست تلنگانہ میں کانگریس کے دوسری جماعتوں کے ساتھ اتحاد اور امیدواروں کے انتخاب کے موضوع پر راہول گاندھی کی جانب سے رہنمائی کئے جانے کی اطلاع ہے ۔ اتم کمارریڈی نے کہا کہ تلنگانہ میں کانگریس نے بہر صورت ٹی آر ایس کو شکست فاش دینے کا تہیہ کرلیا ہے ۔ اس مقصد میں کامیابی حاصل کرنے کیلئے دیگر ہم خیال سیاسی جماعتوں کے ساتھ انتہائی مفاہمت کی کوشش کی جارہی ہے ۔ انہوںنے کہا کہ راہول گاندھی نے پارٹی قائدین کو ہدایت دی ہے کہ وہ انتخابی مفاہمت کے موضوع پر کھلے عام اظہار خیال سے گریز کریں۔ انہوںنے مزید کہا کہ انتخابی مفاہمت کے باوجود ایسے حلقہ جات جہاں سے کانگریس امیدوار کی کامیابی یقینی ہو، وہاں سے دوسری جماعتوں کے امیدواروں کو کھڑا کرنے نہیں دیا جائے گا ۔ بلکہ ان حلقوں سے کانگریس کے امیدواروں کو ہی نامزد کیا جائے گا ۔ انتخابی مفاہمت کے مسئلہ پر قطعی فیصلہ پارٹی ہائی کمان کا ہی ہوگا ۔ انچارج کانگریس اور آر سی کنتیا نے کہا کہ راہول گاندھی کے ساتھ آج تلنگانہ کے کانگریس قائدین کے ساتھ ہوئی ملاقات کے دوران تجاویز اور مشورہ طلب کئے گئے۔ تلگودیشم پارٹی تلنگانہ اور سی پی آئی کے ساتھ انتخابی مفاہمت کے موضوع پر بات چیت کیلئے ذمہ د اری سونپی گئی ہے ۔ تاہم حتمی فیصلہ پارٹی ہائی کمان کا ہی ہوگا ۔ انہوںنے واضح کیا کہ پارٹی کے اہم قائدین جن حلقوں سے نمائندگی کرتے ہیں، ان حلقوں سے دستبرداری کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا ۔ آر سی کنتیا نے کہا کہ کے سی آر کی آمرانہ حکمرانی سے ریاست کو چھٹکارا دلانا ہی اولین مقصد ہے۔آر سی کنتیا نے کہا کہ راہول گاندھی ، تلنگانہ میں 10 جلسہ عام سے خطاب کریں ۔ اطلاع کے ناموں کا بہت جلد اعلان کیا جائے گا۔

جواب چھوڑیں