وزیراعظم کے نور نظر نے وجئے مالیا کی مدد کی: راہول گاندھی

کانگریس صدر راہول گاندھی نے ہفتہ کے دن جوائنٹ ڈائرکٹر سی بی آئی ‘ اے کے شرما پر جو گجرات کے آئی پی ایس عہدیدار ہیں‘ وجئے مالیا کو ہندوستان سے بھاگنے میں مدد دینے کا الزام عائد کیا۔ انہوں نے کہا کہ 2015 میں سی بی آئی میں تعینات شرما ‘ نیرؤ مودی اور میہول چوکسی کے فرار ہونے کے منصوبوں کے بھی انچارج تھے۔ کانگریس صدر نے یہ بھی الزام عائد کیا کہ شرما‘ سی بی آئی میں وزیراعظم نریندر مودی کے نورنظر ہیں۔ راہول نے قبل ازیں وزیر فینانس ارون جیٹلی پر وجئے مالیا سے ملی بھگت کا الزام عائد کیا تھا۔ لندن میں وجئے مالیا کے اخراج کیس کی سماعت مکمل ہوچکی ہے اور 10 دسمبر کو عدالت کا فیصلہ آنے والا ہے۔ پی ٹی آئی کے بموجب کانگریس صدر راہول گاندھی نے ہفتہ کے دن الزام عائد کیا کہ سی بی آئی میں وزیراعظم مودی کے نورنظر نے وجئے مالیا کے خلاف لُک آؤٹ نوٹس کمزور کی۔ ٹویٹر پر راہول گاندھی نے الزام عائد کیاکہ سی بی آئی میں گجرات کیڈر کے عہدیدار اے کے شرما نے وجئے مالیا کے خلاف لُک آؤٹ نوٹس کو کمزور کرنے میں اہم رول ادا کیا۔ کانگریس صدر نے الزام عائد کیا کہ اسی عہدیدار نے جوہری نیرؤ مودی اور میہول چوکسی کے ہندوستان سے بھاگنے کے منصوبوں میں بھی کلیدی رول ادا کیا۔ راہول نے مائیکرو بلاگنگ سائٹ پر لکھا کہ جوائنٹ ڈائرکٹر سی بی آئی ‘ اے کے شرما نے لُک آؤٹ نوٹس کمزور کی جس سے وجئے مالیا کو ہندوستان چھوڑنے میں مدد ملی۔ گجرات کیڈر کا عہدیدار شرما‘ سی بی آئی میں وزیراعظم مودی کا نورنظر ہے۔ یہی عہدیدار ‘ نیرؤ مودی اور میہول چوکسی کو بھگانے کے منصوبوں کا بھی انچارج تھا۔ راہول گاندھی اور ان کی پارٹی نے مودی اور ارون جیٹلی کو وجئے مالیا کے ملک سے فرار ہونے کے لئے موردِ الزام ٹھہرایا ہے۔کانگریس نے جیٹلی کے استعفیٰ کا مطالبہ بھی کیا۔

جواب چھوڑیں