سشما سوراج پر شاہ محمود قریشی کا طنز

 پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی جنہیں ہندوستانی وزیر خارجہ سشما سوراج نے سارک اجلاس میں نظرانداز کردیا تھا‘ نجی انتقام پر اتر آئے۔ انہوں نے نیویارک میں ان کے خلاف غیرپیشہ ورانہ ریمارکس کئے۔ قریشی نے ہنستے ہوئے کہا کہ جب میں نے وزیر خارجہ ہند کو دیکھا تو مجھے تشویش ہوئی۔ وہ مجھے بیمار لگ رہی تھیں۔ وہ بڑی پریشان دکھائی دے رہی تھیں۔ کاش ہم دونوں ایک دوسرے کو مسکراکر دیکھ پاتے۔ شاہ محمود قریشی نے جمعہ کے دن ایشیا سوسائٹی کے اجلاس میں یہ ریمارکس کئے۔ جمعرات کو سشما سوراج نے سارک اجلاس میں پاکستانی وزیر خارجہ کو نظرانداز کردیا تھا اور ان کی تقریر سنے بغیر ہوٹل چلی گئی تھیں۔ حاضرین میں بیشتر لوگوں نے جن میں پاکستانیوں کی بڑی تعداد تھی‘ شاہ محمود قریشی کے ساتھ قہقہہ نہیں لگایا۔ پاکستانی وزیر خارجہ نے کہا کہ مجھے ہندوستانی وزیر خارجہ بڑے تناؤ میں دکھائی دیں۔ انہوں نے میڈیا سے تک بات نہیں کی۔ مجھے کوئی مسئلہ نہیں لیکن میں نے انہیں دباؤ میں دیکھا۔ ان پر سیاسی دباؤ ہے۔ سیاست اس کے سوا کچھ نہیں ان کے ملک کی اندرونی سیاست۔

جواب چھوڑیں