موقع ملنے پر قیادت کیلئے تیار ہوں:روہت شرما

ویراٹ کوہلی کی غیرموجودگی میں ہندوستانی ٹیم کی قیادت کرنے والی سلامی بلے باز روہت شرما نے کہاکہ مستقبل میں موقع ملتاہے تو ٹیم انڈیا کی کپتانی کیلئے تیار ہیں۔ واضح رہے کہ روہت شرما کی قیادت میں ہندوستانی ٹیم نے گذشتہ رات بنگلہ دیش کو 3 وکٹوں سے شکست دیکر 7 ویں مرتبہ ایشیاء کپ کا فائنل جیتا۔ اس کے علاوہ روہت کی قیادت میں ہندوستانی ٹیم نے سری لنکا میں کھیلے گئے سہ رخی ٹی ٹوئنٹی ٹورنامنٹ میں بھی خطابی جیت حاصل کی تھی۔ 3 مرتبہ ٹائٹل آئی پی ایل ٹائٹل جیتنے والی ممبئی انڈینس کے کپتان روہت شرما نے کہاکہ اگر مستقبل میں انہیں موقع ملتاہے تو وہ طویل عرصہ کیلئے ہندوستان کی قیادت کیلئے تیار ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ عارضی طورپر قیادت کرنا بھی ایک چیالنج ہوتاہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایشیاء کپ میں تمام کھلاڑیوں نے اپنی اپنی ذمہ داری بخوبی نبھائی جس کی وجہ سے خطابی کامیابی حاصل ہوئی۔ تاہم روہت شرما نے تمیم اقبال اور شکیب الحسن کے بغیر بھی شاندار کارکردگی پیش کرنے والی بنگلہ دیشی ٹیم کی بھی ستائش کی جس کے خلاف ہندوستانی ٹیم کو جیت کیلئے آخری گیند تک مقابلہ کرنا پڑا۔ روہت شرما نے خاص طورپر اوپنر لٹن داس اور آف اسپنر مہدی حسن کی پرزور ستائش کی۔ دریں اثناء بنگلہ دیشی کپتان مشرفی مرتضیٰ نے فائنل میں شکست کے باوجود اپنے کھلاڑیوں کی ستائش کرتے ہوئے اپنے مظاہرہ پر فخر کا اظہار کیاہے۔ اوپنر لٹن داس کی شاندار سنچری (117 گیندوں پر 121 رن) کے باوجود بنگلہ دیشی ٹیم کو 3 وکٹس سے شکست اٹھانی پڑی ۔ مرتضیٰ نے کہاکہ ان کی ٹیم کو اپنی خامیوں پر قابو پانا ہوگا تاہم انہوں نے کھلاڑیوں کے مظاہرہ پر مسرت کا اظہار کیا۔ مرتضیٰ نے کہا کہ ہندوستان دنیا کی طاقتور ٹیم ہے اور اسے جیت کیلئے آخری گیند تک کھیلنے پر مجبور کرنا ہماری کامیابی ہے۔ مرتضیٰ نے کہاکہ لٹن داس ایک باصلاحیت کھلاڑی ہیں جو آنے والے دنوں میں مزید بہتر ثابت ہوسکتے ہیں۔ انہوں نے آف اسپنر مہدی حسن اور نوجوان فاسٹ بولر مستفیض الرحمن کی بھی ستائش کی۔

جواب چھوڑیں