ڈاکٹر وینکٹ سوامی کے صد سالہ یوم پیدائش پر گوگل کا ڈوڈل

 سرچ انجن گول نے پیر کے روز ملک کے ماہر امراض چشم ڈاکٹر گووندپّا وینکٹ سوامی کے 100 ویں یوم پیدائش پر ڈوڈل بناکر انہیں خراج پیش کیا۔گوگل نے اپنے اس ڈوڈل میں ڈاکٹر وینکٹ سوامی کی تصویر اور اس کے پس منظر میں ان کے قائم کردہ ہاسپٹل کو بھی دکھایا ہے۔ڈاکٹر وینکٹ سوامی کی پیدائش یکم اکتوبر 1918 کو ٹا ملناڈو کے ضلع ویرود نگر کے وڈا ملّ پورم گاؤں میں ہوئی تھی۔ انہوں نے اپنی پوری زندگی نابینا افراد کی فلاح کے لئے وقف کردی تھی۔ انہوں نے موتیا بند جیسی بیماری کے علاج کے لئے الگ طرح کی سرجری کا طریقہ علاج دریافت کیا۔ڈاکٹر گووندپا نے مدورائی کے امریکن کالج سے کیمسٹری میں گریجویشن کی۔ اس کے بعد انہوں نے مدراس کے اسٹینلی میڈیکل کالج سے میڈیکل کی ڈگری حاصل کی۔ اس کے علاوہ ڈاکٹر وینکٹ سوامی نے 1945 سے تین برس تک ہندوستانی فوج میں فزیشین کے طور پر کام کیا۔ڈاکٹر وینکٹ سوامی نے آنکھوں کے علاج کا مطالعہ کیا۔ گوگل بلاگ کے مطابق ڈاکٹر وینکٹ سوامی ایک دن میں آنکھوں کی تقریباً 100 سرجری کرسکتے تھے۔ انہوں نے دیہی علاقوں میں نابیناؤں کے علاج کے لئے آنکھوں کے کیمپ لگائے اور موتیا بند جیسی بیماری کی سرجری کی۔ڈاکٹر وینکٹ سوامی نے 1976 میں 58 برس کی عمر میں اروند آئی ہاسپٹل قائم کیا جہاں آج بھی نابینا افراد کا بہت ہی کم خرچ میں علاج کیا جاتا ہے۔حکومت نے ڈاکٹر وینکٹ سوامی کے بہترین کاموں کے لئے انہیں سال 1973 میں پدم شری اعزاز سے سرفراز کیا۔ جولائی 2006 میں 87 برس کی عمر میں ڈاکٹر سوامی کا انتقال ہوا۔

جواب چھوڑیں