ایران اپنی نیوکلیر سرگرمیوں کو بڑھا رہا ہے: جان بولٹن

امریکی قومی سلامتی کے مشیر جون بولٹن نے کل ایک بیان میں دعویٰ کیا کہ ایران اپنی نیوکلیر سرگرمیوں میں اضافہ کر رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ایران عشروں سے مشرق وسطیٰ کو اپنے بیلسٹک میزائلوں اور جوہری ہتھیاروں سے ڈرا دھمکا کر انہیں نقصان پہنچانے کی پالیسی پر عمل پیرا ہے۔جون بولٹن کا کہنا تھا کہ ایران نہ صرف اپنے بیلسٹک میزائلوں اور جوہری ہتھیاروں سے مشرق وسطیٰ میں خوف و ہراس پھیلا رہا ہے بلکہ ایران کے خطے میں معاندانہ تصرفات بھی دہشت گردی کا حصہ ہے۔ ایران عالمی دہشت گردی کا مرکزی بنک بن چکا ہے۔درایں اثناء شمالی اوقیانوس اتحاد کے سیکرٹری جنرل ینس سٹولٹنبرگ نے پڑوسی ملکوں کو خوف زدہ کرنے کی ایرانی سرگرمیوں پر گہری تشویش کااظہار کیا ہے۔ نیٹو کے عہدیدار نے تہران کی طرف سے خطے کے عسکریت پسند گروپوں کی مدد کو بھی باعث تشویش قرار دیا گیا۔مسٹر ا سٹولٹن برگ نے ایک بیان میں کہا کہ ‘نیٹو’ اور اس کے اتحادیوں کو خطے اور پڑوسی ملکوں کے حوالے سے ایرانی سرگرمیوں پر گہری تشویش ہے۔

جواب چھوڑیں