ناگپور میں برہموس مزائل یونٹ سے پاکستانی جاسوس گرفتار

انٹر سرویسس انٹلیجنس(آئی ایس آئی) کے ایک پاکستانی جاسوس کو پیر کے دن ناگپور کے حساس برہموس مزائل یونٹ (ایرو اسپیس سنٹر) سے گرفتار کرلیا گیا۔ گرفتار جاسوس کا نام نشانت اگروال بتایا جاتا ہے۔ وہ برہموس ایرو اسپیس سنٹر ناگپور میں کام کرتا ہے۔ اس پر شبہ ہے کہ وہ پاکستانی آئی ایس آئی اور امریکی انٹلیجنس کے لئے کام کرتا تھا۔ اس نے برہموس مزائل کی جانکاری ان ممالک کو دی۔ اترپردیش اور مہاراشٹرا اے ٹی ایس کی مشترکہ کارروائی میں اس جاسوس کو پکڑا گیا۔ اس کے خلاف سرکاری راز قانون کے تحت معاملہ درج ہوا ہے۔ نشانت اگروال پر الزام ہے کہ وہ اس اہم یونٹ کے فنی رازپاکستان اور امریکی ایجنسیوں کو دے رہا تھا۔ ایک ٹیم اتوار کی رات سے اس پر نظررکھی ہوئی تھی۔ پیر کے دن دھاوے میں آخرکار اسے پکڑلیا گیا۔ ذرائع نے یہ بات بتائی۔ یہ شخص برہموس ایرو اسپیس یونٹ میں گذشتہ 4 سال سے کام کررہا تھا ۔برہموس ایرو اسپیس جس کا اڈہ ناگپور کے قریب واقع ہے‘ ہندوستان اور روس کا مشترکہ وینچر ہے۔ گذشتہ برس اس نے بعض عصری اسلحہ سسٹم کا تجربہ کیا تھا۔ حکام خاموش ہیں۔ برہموس ایرو اسپیس یونٹ نے بھی خاموشی اختیار کررکھی ہے۔ 19 ستمبر کو نوئیڈا سے ایک بی ایس ایف جوان اچھوتانند مشرا کو پاکستانی آئی ایس آئی ایجنٹس کو اہم جانکاری دینے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔ یہ جوان مدھیہ پردیش کے ریوا سے تعلق رکھتا تھا۔ برہموس ‘ ڈی آر ڈی اور روس کی این پی او ایم کا مشترکہ وینچر ہے۔ یہ دنیا کا انتہائی تیز رفتار سوپر سونک مزائل ہے ۔ اس کی رفتار‘ آواز کی رفتار سے 3گنا زائد ہوتی ہے۔

جواب چھوڑیں