اسمبلی تحلیل کرتے ہوئے کے سی آر نے اپنی قبرخود کھودلی:اتم کمارریڈی

صدرتلنگانہ کانگریس کمیٹی این اتم کمار ریڈی نے آج دوپہر گن پارک روبرو تلنگانہ اسمبلی ‘اندراوجئے رتھم کوجھنڈی دکھا کر روانہ کیا۔ سابق صدرپی سی سی وی ہنمنت رائو کی زیر قیادت ’’ انداروجئے رتھم‘‘ حیدرآباد سے براہ اسمبلی حلقہ جات گجویل ‘دوماٹ‘ میدک ‘رامائم پیٹ‘ سنگاریڈی سے 14 اکتوبر کوپٹن چیروپہنچ کر اختتام کوپہنچے گی ۔ دسہرے تہوار کے بعد دوسرے مرحلہ کی یاترا کاآغاز ہوگا۔ اس موقع پر این اتم کمارریڈی نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہاکہ نگرانکار چیف منسٹر کے چندرشیکھررائو نے 9 ماہ قبل اسمبلی تحلیل کرتے ہوئے اپنی سیاسی قبرخود کھودلی ہے ۔ 11دسمبر کو نتائج کے دن کانگریس کی زیر قیادت عظیم اتحاد کے چندرشیکھررائو کو سیاسی طورپر دفن کردے گا ۔ انہوں نے کہاکہ آئندہ انتخابات میں کانگریس ‘ تلگودیشم اور دیگر جماعتوں نے متحدہ طورپر مقابلہ کرنے کا فیصلہ کیاہے جس سے کے سی آر کی نیند حرام ہوچکی ہے اور بوکھلاہٹ وشکست کے خوف سے کے سی آر اپوزیشن قائدین پر بے بنیاد الزامات عائد کررہے ہیں اور تلگودیشم کو آندھرا کی پارٹی کہاجارہاہے ۔ انہوں نے سوال کیا کہ سابق تلگودیشم قائدین ٹی سرینواس یادو ‘ ٹی ناگیشوررائو اور مہیندرریڈی کو کے سی آر نے اپنی کابینہ میں کیوںشامل کیا ؟ انہوں نے سوال کیا کہ آیا یہ تین وزراء نے کبھی تلنگانہ تحریک میںحصہ لیاہے ؟ کے سی آر نے تلنگانہ کے تقریباً تمام غداروں کو اپنی حکومت میں عہدوں سے نوازا ہے ۔ انہوں نے ٹی آرایس اورایم آئی ایم کی دوستی پربھی سوال اٹھائے اور کہاکہ مجلس نے ابتداہی سے علحدہ تلنگانہ کی مخالفت کی تھی ۔ ٹی آرایس نے کئی موقعوں پر سی پی آئی ایم کے ساتھ ملکرکام کیاہے جبکہ سی پی ایم تلنگانہ کی مخالف تھی ۔ اتم کمار ریڈی نے الزام عائد کیاکہ ٹی آرایس نے خفیہ طورپر بی جے پی کے ساتھ مفاہمت کرلی ہے ۔ انہوںنے کہاکہ کے سی آر گذشتہ چارسال کے دوران اے پی تنظیم جدید بل میں دئیے گئے مختلف پراجکٹس کی منظوریوں بشمول قاضی پیٹ میں ریلوے کوچ فیاکٹری اور بیارم میں اسٹیل پلانٹ کے قیام میں ناکام ہوئے ۔ یہاں تک کہ کانگریس کے دور حکومت میں منظورہ آئی ٹی آئی آر پراجکٹ کے قیام کیلئے جس سے تقریباً52 لاکھ ملازمتوں کے مواقع حاصل ہونے والے تھے ٹی آرایس حکومت نے موجودہ بی جے پی حکومت سے کوئی نمائندگی نہیں کی ۔ کے سی آر نے نریندر مودی کے ساتھ دوستی کوتلنگانہ کے مفادات پرترجیح دی ہے ۔ کے سی آر نے خودتلنگانہ کیلئے کچھ نہیں کیا۔ صدر ٹی پی سی سی نے سینئر قائد وی ہنمنت رائو کی خدمات کی ستائش کرتے ہوئے کہاکہ ہنمنت رائو یوتھ کانگریس کے دور سے کانگریس پارٹی سے وابستہ ہیں۔ ان کی اس اندرا وجئے رتھم سے کانگریس کوآئندہ انتخابات میں کامیابی حاصل ہوگی ۔ وی ہنمنت رائو نے خود انتخابات میں حصہ نہ لیتے ہوئے پارٹی کیلئے کام کرنے کا فیصلہ کیاہے جو قابل فخر ہے ۔ اس موقع پر کانگریس قائدین این بوس راجو ‘سرینواس کرشنن ‘ایم انجن کماریادو صدر جی ایچ کانگریس ‘ پی سدھاکر ریڈی ایم ایل سی اور دیگر موجود تھے۔

جواب چھوڑیں