یوپی میں درگا مورتی نصب کرنے کے مسئلہ پر فرقہ وارانہ تصادم

 درگا کی مورتی نصب کرنے کے مسئلہ پر یہاں سیاسی سالوں علاقہ میں دو فرقوں میں جھڑپ کے دوران مداخلت کی کوشش پر 6 پولیس ملازمین زخمی ہوگئے۔ یہ واقعہ چہارشنبہ کے روز اس وقت پیش آیا جب بعض افراد نے متعلقہ حکام سے اجازت حاصل کئے بغیر ریسیا پولیس اسٹیشن کے حدود میں درگا کی مورتی نصب کرنے کی کوشش کی۔ ایڈیشنل سپرنٹنڈنٹ پولیس (رورل) رویندر کمار سنگھ نے یہ بات بتائی۔ انہوں نے کہا کہ دوسرے فرقہ کے ارکان نے اس پر اعتراض کیا جس کے نتیجہ میں جھڑپ ہوگئی۔ ہندوؤں اور مسلمانوں نے ایک دوسرے پر سنگباری کی۔ متصادم گروپس نے پولیس ٹیم پر بھی حملہ کردیا جو صورتحال پر قابو پانے وہاں پہنچی تھی۔ اس واقعہ میں 6 پولیس ملازمین زخمی ہوئے جن میں 2 سب انسپکٹرس اور 4 کانسٹیبل شامل ہیں۔ اے ایس پی نے بتایا کہ متصادم گروپس میں کسی کے زخمی ہونے کی انہیں کوئی اطلاع نہیں ہے ۔ پولیس نے دونوں برادریوں کے 290 افراد کے خلاف کیسس درج کرلئے ہیں۔ 40 کو نامزد کیا گیا ہے اور 15 کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ عہدیدار نے بتایا کہ اس علاقہ میں اضافی فورس بھی تعینات کی گئی ہے اور صورتحال قابو میں ہے۔

جواب چھوڑیں