ایرانڈیا ایکسپریس طیارہ کے پہیے دیوار سے ٹکراگئے

تریچراپلی(ٹاملناڈو) تا دُبئی ایرانڈیا ایکسپریس پرواز کے مسافرین ایک بڑے حادثہ سے محفوظ رہے۔ ایرانڈیا ایکسپریس ‘ ایرانڈیا کی بجٹ ایرلائن ہے۔ جمعہ کی صبح ٹیک آف (اڑان بھرنے) کے دوران طیارہ کے پہیے ایرپورٹ کے احاطہ کی دیوار سے ٹکراگئے تھے۔ عہدیداروں نے یہ بات بتائی۔ پرواز IX-611 نے جس میں 130مسافرین اور 6 ارکان عملہ شامل تھے‘ جمعرات کی رات لگ بھگ 1:20 بجے اڑان بھری تھی۔ اسے ممبئی کی سمت موڑدیاگیا جہاں اس نے لگ بھگ 5:40 بجے (صبح) بحفاظت ایمرجنسی لینڈنگ کی۔ تریچی کے گراؤنڈ اسٹاف نے کپتان ڈی گنیش بابو(پائلٹ) کو پہیے دیوار سے ٹکرانے کی اطلاع دی۔ کپتان نے بتایا کہ طیارہ کا سسٹم حسب معمول کام کررہا ہے لیکن انہوں نے بطور احتیاط طیارہ کا رخ ممبئی کی سمت کردیا۔ ایر انڈیا کے ایک عہدیدار نے یہ بات بتائی۔ بوئنگ 737-800 طیارہ نے ممبئی ایرپورٹ پر بحفاظت لینڈنگ کی۔ تمام مسافرین کو اتارکر متبادل پرواز اور نئے ارکان عملہ کا انتظام کرکے دُبئی بھیج دیا گیا۔ ایر انڈیا نے تحقیقات مکمل ہونے تک کپتان ڈی گنیش بابو کو جنہیں بوئنگ 737 طیارہ 3600 گھنٹے اور بحیثیت کمانڈر 500 گھنٹے اڑان بھرنے کا تجربہ ہے‘ ڈی روسٹر کردیا ہے یعنی ان کا نام رجسٹر سے ہٹادیا ہے۔ معاون پائلٹ فرسٹ آفیسر کپتان انوراگ کا نام بھی رجسٹر سے ہٹایا گیا ہے۔ انہیں لگ بھگ 3600 گھنٹے اڑان بھرنے کا تجربہ ہے۔ بوئنگ طیارہ کے پہیوں کو کتنا نقصان پہنچا یہ پتہ نہیں لیکن تریچراپلی ایرپورٹ کی لگ بھگ 5 فیٹ کی باؤنڈری وال کے ایک حصہ کو نقصان پہنچا۔ ایرپورٹ عہدیدار نے آئی اے این ایس کو یہ بات بتائی۔ ایرپورٹ عہدیداروں نے عجیب وغریب حادثہ کی تحقیقات شروع کردی ہیں جبکہ ممبئی کے ٹیکنیشین پتہ چلارہے ہیں کہ طیارہ کو کتنا نقصان پہنچا۔ ٹاملناڈو کے وزیر سیاحت این نٹراجن نے تریچی ایرپورٹ پہنچ کر دیوار کا معائنہ کیا ۔ وزیر شہری ہوابازی سریش پربھو نے کہا کہ وہ حال میں ہدایت دے چکے ہیں کہ ایرانڈیا کے مختلف سیفٹی پہلوؤں کا جائزہ لینے تھرڈ پارٹی پروفیشنل تنظیم کو حرکت میں لایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ ترقی‘ سیفٹی کی قیمت پر نہیں ہوسکتی۔ پی ٹی آئی کے بموجب دُبئی جانے والی ایرانڈیا ایکسپریس پرواز کے مسافرین اس وقت کرشماتی طورپر محفوظ رہے جب ان کے طیارہ کے پہیے اڑان بھرنے کے دوران باؤنڈری وال سے ٹکراگئے۔ طیارہ کا رخ ممبئی کی طرف موڑدیاگیا۔ کوئی بھی زخمی نہیں ہوا اور طیارہ نے جمعہ کی صبح 5:35 بجے ممبئی میں سیف لینڈنگ کی۔ ایرانڈیا ایکسپریس نے کہا کہ تحقیقات مکمل ہونے تک دونوں پائلٹ لائن حاضر رہیں گے یعنی ڈیوٹی نہیں کرسکیں گے۔ معاملہ‘ ڈائرکٹوریٹ جنرل سیول ایوی ایشن سے رجوع کردیا گیا ہے اور ایرلائن تحقیقات میں تعاون کررہی ہے۔

جواب چھوڑیں