ایم جے اکبر‘ عدالت سے رجوع۔پریہ رمانی کے خلاف فوجداری ہتک عزت مقدمہ دائر

مرکزی وزیر ایم جے اکبر نے آج صحافی پریہ رمانی کے خلاف خانگی فوجداری ہتک عزت شکایت درج کرائی جنہوں نے ان پر جنسی ہراسانی کا الزام عائد کیا تھا۔ ہندوستان میں می ٹو تحریک زور پکڑچکی ہے۔ مملکتی وزیر خارجہ نے پریہ رمانی پر انہیں دانستہ بدنام کرنے کا الزام عائد کیا۔ شکایت وکیل سندیپ کپور کے ذریعہ داخل کی گئی۔ گذارش کی گئی کہ پریہ رمانی کو انڈین پینل کوڈ(آئی پی سی) کی دفعہ 499 کے تحت نوٹس جاری کی جائے۔ تعزیرات ہند کی اس دفعہ کے تحت خاطی قرارپانے پر 2سال کی جیل یا جرمانہ یا دونوں سزائیں ایک ساتھ ہوسکتی ہیں۔ آفریقہ کے دورہ سے واپسی کے چند گھنٹوں میں ایم جے اکبر نے کل بیان جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ ان کے خلاف کئی خاتون صحافیوں کے الزامات جھوٹے ‘بے بنیاد اور بے ہودہ ہیں۔ انہوں نے کہا تھا کہ وہ الزام عائد کرنے والیوں کے خلاف قانونی کارروائی کریں گے۔ سوشل میڈیا پر ایم جے اکبر کا نام اس وقت آیا تھا جب وہ نائیجیریا میں تھے۔ ان پر الزام عائد کرنے والی صحافیوں میں پریہ رمانی ‘ غزالہ وہاب‘ شوما راہا ‘ انجو بھارتی اور شوتاپہ پال شامل ہیں۔ آئی اے این ایس کے بموجب مبشر جاوید اکبر نے پٹیالہ ہاؤز کورٹ کامپلکس میں مقدمہ دائر کیا۔ انہوں نے 2 سینئر خاتون صحافیوں اور دیگر 4 کو گواہ بنایا ہے۔

جواب چھوڑیں