بیرونی دوروں میں بیویوں اور گرل فرینڈز کو ساتھ رکھنے کی اجازت

ہندوستانی کپتان ویراٹ کوہلی کی اپیل کے بعد ہندوستانی کرکٹ کنٹرول بورڈ (بی سی سی آئی) نے اپنے ضابطے میں تبدیلی کرتے ہوئے قومی ٹیم کے کھلاڑیوں کی بیویوں اور گرل فرینڈ کو ان کے ساتھ غیرملکی دورے میں جانے کی اجازت دے دی۔ رپورٹ کے مطابق بی سی سی آئی کا کام کاج سنبھالنے والی منتظمین کی کمیٹی (سی او اے) نے ہندوستانی کھلاڑیوں کو ان کی بیویوں اور گرل فرینڈ کو دورہ پر لے جانے کی اجازت دے دی ہے۔ اگرچہ یہ چھوٹ کسی غیرملکی دورے کے شروع ہونے کے 10 دن بعد سے شروع ہوگی اور اس کے بعد دورے کے اختتام تک بیویاں اور گرل فرینڈ کھلاڑیوں کے ساتھ رہ سکتی ہیں۔ حال ہی میں ہندوستانی کپتان کوہلی نے بی سی سی آئی سے بیویوں کو کرکٹ دورے پر لے جانے کے ضابطے میں تبدیلی کرنے کیلئے کہاتھا۔ پہلے ضابطے میں بیویوں کو صرف 2 ہفتے کیلئے کرکٹر اپنے ساتھ رکھ سکتے تھے۔ سی او اے کے اس ضابطے کو نافذ کرنے کے پیچھے یہ دلیل تھی کہ خاندان سے دور رہنے پر کھلاڑی اپنی کارکردگی پر زیادہ توجہ دے سکیں گے۔ ہندوستانی ٹیم کی غیرملکی دورے میں عام طورپر مایوس کن کارکردگی رہی ہے یہ بھی اس ضابطے کی ایک بڑی وجہ تھی۔ عام طورپر سبھی کرکٹ کھلاڑی اپنی بیوی اور گرل فرینڈ کو دورہ پر لے جاتے ہیں۔ ویراٹ ، اجنکیا رہانے، روہت شرما، مہیندر سنگھ دھونی اور چتیشور پجارا کی بیویاں بھی زیادہ تر دورے پر ان کے ساتھ رہتی ہیں۔ ہندوستانی کرکٹ ٹیم کا آئندہ بیرونی دورہ آسٹریلیا ہوگا۔ واضح رہے کہ سال 2015 میں کرکٹ آسٹریلیا (سی اے) کے چیف اگزیکٹیو جیمس سودرلینڈ نے بھی اس طرح کا فیصلہ آسٹریلیائی کرکٹ کھلاڑیوں کیلئے جاری کیا تھا۔ اس کے بعد سی او اے نے بھی اس طرح کے ضابطے کو نافذ کیاتھا جس پر اب ہندوستان میں بھی عمل ہوگا۔

جواب چھوڑیں