محمد عباس کی تباہ کن بولنگ۔پاکستان کو 281 رنوں کی سبقت

محمد عباس کی شاندار بولنگ اور بلے بازوں کی ذمہ دارانہ بیٹنگ کی بدولت پاکستان نے آسٹریلیا کے خلاف دوسرے ٹسٹ میچ میں مجموعی طورپر 281 رنز کی برتری حاصل کرلی۔ دوسرے ٹسٹ میچ کا دوسرا دن شروع ہوا تو آسٹریلیا کے 20 رنز پر 2 کھلاڑی آوٹ تھے۔ آرون فنچ کا ساتھ دینے شان مارش آئے تاہم 36 رنز کے مجموعی اسکور پر محمد عباس نے مارش کو حارث سہیل کے کیچ کی مدد سے پویلین بھیج دیا جبکہ اسکور میں 20 رنز کے اضافے سے ٹریوس ہیڈ بھی عباس کا شکار بن گئے۔ 75 کے مجموعی اسکور پر آسٹریلیا کی پانچویں وکٹ گری جب مشل مارش 13 رنز بنانے کے بعد یاسر شاہ کے ہاتھوں پویلین لوٹے۔ دوسرے اینڈ پر موجود اوپنر ارون فنچ کی ہمت بھی جواب دے گئی اور 85 کے اسکور پر وہ 39 رنز بنانے کے بعد بلال آصف کی اننگز میں پہلی وکٹ بنے جبکہ آف اسپنر نے صرف 6 رنز کے اضافہ سے آسٹریلین کپتان ٹم پین کو بھی رخصت کردیا۔ 7 وکٹیں گرنے کے بعد ایسا محسوس ہوتا تھاکہ شاید آسٹریلین ٹیم 100 کا ہندسہ بھی عبور نہ کرسکے لیکن مارنس لبوشین اور مشل اسٹارک نے 8 ویں وکٹ کیلئے 37 رنز جوڑکر ٹیم کا اسکور 128تک پہنچادیا۔ کینگرو کی آٹھویں وکٹ 128 رنز پر گری جب مارنس لبوشین اس وقت بدقسمت ثابت ہوئے جب بیاٹسمین کی جانب سے کھیلے گئے شاٹ پر گیند یاسر شاہ کے ہاتھوں سے لگ کر وکٹوں میں جالگی اور اس وقت لبوشین کا بلا ہوا میں تھا۔ نویں وکٹ بلال آصف کے حصہ میں آئی جنہوں نے ناتھن لیون کو 2 رنز کے انفرادی اسکور پر کلین بولڈ کیا۔ مشل اسٹارک آؤٹ ہونے والے آخری آسٹریلین بلے باز تھے جنہیں محمد عباس نے 145 کے مجموعی اسکور پر نے پویلین بھیجا ۔ اس طرح پاکستانی ٹیم نے پہلی اننگز میں 137 رنز کی برتری حاصل کی۔ پاکستان کی جانب سے محمد عباس نے عمدہ بولنگ کرتے ہوئے صرف 33 رنز کے عوض 5 وکٹیں لیں جبکہ بلال آصف نے 3 وکٹیں حاصل کیں۔ 137 رنز کی برتری حاصل کرنے کے بعد پاکستان نے دوسری اننگز دوبارہ شروع کی تو محمد حفیظ اپنی 38 ویں سالگرہ کے دن بھی ناکامی سے دوچار ہوئے اور صرف 6 رنز بناکر اسٹارک کی وکٹ بن گئے۔ اس موقع پر فخر زمان کا ساتھ دینے اظہر علی آئے اور دونوں کھلاڑیوں نے ابتدائی نقصان کا ازالہ کرتے ہوئے دوسری وکٹ کیلئے 91 رنز کی شراکت داری قائم کی۔ فخر زمان 7 چوکوں کی مدد سے 66 رن بناکر آئوٹ ہوئے۔ اس کے بعد آسٹریلین ٹیم کی نپی تلی بولنگ کے باوجود حارث سہیل اور اظہر علی نے مزید کوئی وکٹ نہ گرنے دی اور جب میچ کے دوسرے دن کا کھیل ختم ہوا تو پاکستان نے 2 وکٹ کے نقصان پر 144رنز بناکر میچ میں مجموعی طورپر 281 رنز کی برتری حاصل کرلی۔ اظہر علی 54 اور حارث 17 رنز پر بیٹنگ کررہے ہیں۔ واضح رہے کہ کپتان سرفراز احمد اور پہلا ٹسٹ میچ کھیلنے والے فخر زمان کی 94، 94 رنز کی شاندار اننگز کی بدولت پاکستان نے میچ کی پہلی اننگز میں 282 رنز بنائے تھے۔

جواب چھوڑیں