کشمیر میں انکاؤنٹر3 عسکریت پسند ہلاک

شہرخاص سری نگر میں چہارشنبہ کی صبح انکاؤنٹر میں 3 عسکریت پسند ہلاک ہوئے اور ایک ملازم پولیس شہید ہوا۔ حکام نے گرمائی دارالحکومت میں تمام کالجس اور اسکولس بند کردینے کا حکم دیا ہے۔ احتیاطی اقدام کے طور پر موبائیل، انٹرنیٹ سرویس معطل کردی گئی ہے۔ مقامی، قومی اور بین الاقوامی میڈیا کے 12 ویڈیو؍ فوٹوجرنلسٹس اور رپورٹرس کو انکاؤنٹر کے دوران سیکیوریٹی فورسیس کی مارجھیلنی پڑی۔ پولیس ترجمان نے یواین آئی کو بتایاکہ عسکریت پسندوں کی موجودگی کی ٹھوس جانکاری ملنے پر ریاستی پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ(ایس او جی) فوج اور سی آرپی ایف نے فتح کدل میں چہارشنبہ کی صبح مشترکہ تلاشی مہم شروع کی تھی۔ سیکیوریٹی فورسیس نے ایک مخصوص علاقہ کی سمت بڑھنا جیسے ہی شروع کیا ایک مکان میں چھپے عسکریت پسندوں نے آٹومیٹک ہتھیاروں سے فائرنگ کردی۔ سیکیوریٹی فورسس کو جواب دینا پڑا اور اس کے ساتھ ہی انکاؤنٹر شروع ہوگیا۔ 3 عسکریت پسند مارے گئے جبکہ 5 سیکیوریٹی جوان (3ایس اوجی اور 2 سی آرپی ایف) زخمی ہوئے۔ زخمی جوانوں کو فوری ہسپتال لے جایاگیا جہاں ایک جوان کمل کشور(ریاسی‘ جموں) نے ہسپتال میں داخلہ سے قبل دم توڑدیا۔

جواب چھوڑیں