می ٹو کا استعمال کردار کشی کیلئے ہورہا ہے: ذوالفقار میمن

گلوکارہ شویتا پنڈت کی جانب سے انوملک پر جنسی ہراسانی کا الزام عائد کیے جانے کے ایک دن بعد موسیقار کے وکیل نے کہا کہ ہندوستان میں جاری می ٹو تحریک کا استعمال ان کے موکل کی ’’کردار کشی‘ ‘ کے لیے کیا جارہا ہے۔ پنڈت نے ٹوئٹر پر ملِک پر ’’اغلام باز‘‘ اور’’جنسی شکاری‘‘ ہونے کا الزام عائد کیا اور کہا کہ جب وہ ہندی موسیقی انڈسٹری میں نوآموز تھی انہوں نے ان کے ساتھ بدسلوکی کی۔ ملک نے الزام کی تردیدکی۔ پی ٹی آئی کو دیے گئے اپنے بیان میں ملک کے وکیل ذوالفقار میمن نے کہا کہ ’’میرے موکل کے خلاف عائد کردہ الزامات مکمل طور پر جھوٹے اور بے بنیاد ہیں جن کی پُرزور تردید کی جاتی ہے۔‘‘ میرے موکل می ٹو تحریک کا احترام کرتے ہیں مگر کسی کی کردار کشی کے لیے اس کا استعمال قابل اعتراض ہے۔‘‘ پنڈت پہلی خاتون نہیں ہے جس نے موسیقار پر الزام عائد کیا ہے جو فی الحال گلوکاری کے ٹی وی شو ’’انڈین آئیڈیل‘‘ کے جج ہیں۔ گزشتہ ہفتہ گلوکارہ سوناموہاپاترا نے بھی ملک کو ’’سلسلہ وار شکاری‘‘ قرار دیا تھا جس کی ملک نے تردید کی تھی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *