فیض آباد کا نام سری ایودھیا کردینے وی ایچ پی کا مطالبہ

 وشوا ہندوپریشد (وی ایچ پی) نے جمعہ کے دن حکومت اترپردیش کے الہٰ آباد کا نام بدل کر پریاگ راج کردینے کے فیصلہ کا خیرمقدم کیا اور مطالبہ کیاکہ فیض آباد کا نام سری ایودھیا کردیاجائے۔ وی ایچ پی ترجمان شردشرما نے کہا کہ الہٰ آباد کا نام بدلنے کا مقصد غلامانہ ذہنیت سے آزادی ہے۔ انہوں نے کہا کہ سماج کے سبھی طبقات نے ریاستی حکومت کے اس اقدام کی ستائش کی ہے۔ شرما نے کہا کہ حکومت اترپردیش ‘ عوام اور ان کے جذبات واحساسات کے مفاد میں قدم اٹھارہی ہے۔ الہٰ آباد کا نام بدلنا قابل تعریف ہے۔ اب فیض آباد کا نام بدل کر سری ایودھیا کرنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب بھی کئی سڑکیں، عمارتیں اور اضلاع غلامی کے دنوں کی یاد دلاتے ہیں۔ ہمیں انگریزوں کی حکومت سے تو آزادی ملی لیکن ان کی علامتیں آج بھی ہر ہندوستانی کی عزت نفس کو ٹھیس پہنچاتی ہیں۔ شرد نے کہا کہ یوگی آدتیہ ناتھ کی حکومت دیوالی پر اعلان کرکے ایودھیا کے سادھوسنتوں کو خوش کرسکتی ہے۔

جواب چھوڑیں