چیف منسٹر پنجاب کی امرتسر آمد

 چیف منسٹر پنجاب امریندر سنگھ60 جانیں جانے کے تقریباً16گھنٹے بعد امرتسر پہنچے ۔ چیف منسٹر صدر پردیش کانگریس اور اور گرداس پور کے رکن پارلیمنٹ سنیل جاکھڑ کے ساتھ خصوصی پرواز سے نئی دہلی سے امرتسر پہنچے ۔ انہوں نے ضلع کے سینئر عہدیداروں ‘ کابینی وزرا ء اور کانگریس ارکان اسمبلی کا اجلاس منعقد کیا ۔ حکومت پنجاب نے ہفتہ کے دن سرکاری سوگ کااعلان کیا ۔ چیف منسٹر واقعہ کی تحقیقات کا حکم دے چکے ہیں ۔ چیف منسٹر نے کہاکہ جالندھر ڈیویژنل کمشنر اندرون چار ہفتہ انکوائری کریں گے ۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ مہلوکین میں9 کی شناخت ہونی باقی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ انکوائری میں تمام پہلوؤں کا جائزہ لیاجائے گا ۔ یہ بھی دیکھاجائے گا کہ آیا ٹرین ڈرائیو نے تمام سگنلوں کا لحاظ رکھایا نہیں ۔ انہوں نے کہاکہ ریلویز تحقیقات کررہی ہے ۔ ریاستی حکومت اپنی انکوائری کرارہی ہے ۔ کپتان امریندر سنگھ نے کہا کہ یہ وقت الزامات کا نہیں ہے ۔ تمام جماعتوں کو دکھ کی اس گھڑی میں یکجا ہوجاناچاہئے ۔ یہ پوچھنے پر کہ چیف منسٹر کو امرتسر آنے میں 16 گھنٹے کیوں لگے ۔ انہوں نے کہاکہ مجھے تل ابیب جاناتھا ۔ میں نئی دہلی سے امرتسر آیا ہو ں ۔ ان کے ساتھ کابینی وزراء برہم مہندرا اور نوجوت سنگھ سدھو بھی امرتسر آئے ۔

جواب چھوڑیں