امیدواروں کی لسٹ کی اجرائی سے قبل کانگریس میں ناراضگیاں

 کانگریس پارٹی نے ابھی پارٹی امیدواروں کے ناموں کا اعلان نہیں کیا ہے ۔ مگر امیدواروں کے ناموں کے اعلان سے قبل ہی پارٹی میں ناراضگیاں بڑھتی جارہی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق کانگریس کے کارگذار صدر اے ریونت ریڈی سب سے زیادہ ناراض ہیں۔ انہوںنے اپنے حامیوں کو ٹکٹ دینے کا مطالبہ کیاتھا اور اس مقصد کے تحت وہ گذشتہ چند دنوں سے نئی دہلی میں قیام کئے ہوئے تھے ۔ ریونت ریڈی کے قریبی رفقاء کا کہنا ہے کہ ریونت ریڈی کی کانگریس میں شمولیت کے وقت ان سے وعدہ کیا گیاتھا کہ ان کے سفارش کردہ دس افراد کو اسمبلی انتخابات میں پارٹی امیدوار بنایا جائے گا۔ تاہم کانگریس ہائی کمان نے اس وعدے کو بھلادیاہے جس سے ریونت ریڈی مایوس اور ناراض ہیں اور کارگذار صدر کانگریس کے عہدہ سے استعفیٰ دینے پر غور کررہے ہیں ۔ دوسری طرف ریونت ریڈی نے ان اطلاعات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ چند مخالف کانگریس عناصر اس طرح کا غلط پروپگنڈہ کررہے ہیں۔ اس دوران حلقہ اسمبلی جنگاؤں کو ٹی جے ایس کے لئے چھوڑ دینے کے متعلق خبروں پر سابق صدر ٹی پی سی سی پونالہ لکشمیا کے حامیوں نے شدید ناراضگی ظاہر کی ۔ واضح رہے کہ سابق میں ملکاجگری اور خانہ پور اسمبلی حلقہ جات کو تلگودیشم پارٹی کیلئے چھوڑ دینے کے فیصلہ کے خلاف مقامی کانگریس کارکنوں نے گاندھی بھون میں احتجاج کرتے ہوئے دونوں حلقوں سے کانگریس امیدواروں کو ٹکٹ دینے کا مطالبہ کیا تھا۔

جواب چھوڑیں