سعودی عرب کے مختلف شہروں میں موسلادھار بارش‘تیز ہواوؤں کے ساتھ ژالہ باری

مملکت سعودی عرب کے بیشتر بڑے شہروں میں ہونے والی بارش سے زندگی معطل ہوکر رہ گئی ہے۔ریاض ، الباحہ ، مکہ مکرمہ، طائف ، العرضیات ، اللیث، الخرمہ او رجدہ میں جمعہ کو موسلا دھار بارش ہوئی۔ ریاض میں ڑالہ باری کا سلسلہ بھی رہا۔ دارالحکومت کی سڑکیں زیر آب آگئیں۔ سیلاب کے باعث شہر کے بیشتر انڈر پاس ڈوب گئے۔ کئی سڑکوں پر ٹریفک معطل ہو کر رہ گیا۔ریاض محکمہ ٹریفک نے گاڑیوں کے ڈرائیوروں کو مشرقی سرکلر روڈ کے انڈر پاس و چوراہو ں ، دیراب روڈ او رمغربی سرکلر روڈ کی طرف موڑ دیا۔ یہاں موسلا دھار بارش کی وجہ سے شاہراہیں بند ہوگئیں جبکہ انڈر پاس میں بہت ساری گاڑیاں ڈوب گئیں اور شہر کے مختلف مقامات جھیل کا منظر پیش کرنے لگے۔موسلادھار بارش میں 93افراد پھنس گئے تھے، جنہیں بچا لیا گیا، 71گاڑیوں کو نقصان پہنچا جبکہ شارٹ سرکٹ کے 34واقعات ریکارڈ پر آئے۔الشرقیہ ، القصیم، حدود شمالیہ، مدینہ منورہ، حائل، الجوف، الریاض، جازان، تبوک، نجران، عسیر، الباحہ او رمکہ مکرمہ میں تیز ہواوؤں کے ساتھ ژالہ باری بھی ہوئی۔ بعض مقامات پر درمیانے درجے اور دیگر مقامات پر تیز بارش دیکھنے میں آئی۔مکہ مکرمہ میں موسلا دھار بارش کے باعث وادی عرنہ میں ایک ماہ کے دوران دوسری بار سیلاب آگیا، جنوبی مکہ کا الحسینیہ محلہ موسلا دھار بارش کے باعث زیر آب آگیا۔ الحسینیہ کے باشندوں نے نکاسی آب کے نظام کا شکوہ کرتے ہوئے کہا کہ پتہ نہیں کب تک ہم لوگ سیلاب کے مسائل سے دوچار ہوتے رہیں گے۔اللیث کمشنری میں موسلا دھار بارش نے یہاں کی سڑکوں اور چوراہوں پر پانی کھڑا کردیا، ایک گھنٹے تک مسلسل زوردار بارش ہوتی رہی جس کے باعث سڑکوں پر کھڑی متعدد گاڑیاں ڈوب گئیں اور ٹریفک کا نظام معطل ہوگیا۔جدہ میں جمعہ کو صبح پونے 9بجے سے لگ بھگ 10بجے تک موسلا دھار بارش ہو ئی۔ تاہم نکاسی کا نظام موثر ہونے کے باعث جلد ہی تمام سڑکیں دھوپ نکلنے پر خشک ہوگئیں تاہم بعض نشیبی مقامات پر بارش کا پانی جمع ہو گیا۔عفیف کمشنری میں بھی بارش سے جھیلوں کے مناظر پیدا ہو گئے، طائف میں صبح 10بجے سے رات 9بجے تک گرج چمک، تیز ہواوؤں کے ساتھ بارش اور ڑالہ باری ہوئی۔شہری دفاع کے ترجمان کرنل جمعان دایس نے بتایا کہ بارش کے باعث یہاں کے تمام پہاڑی راستے بند کر دیئے گئے ہیں۔ ماہرین موسمیات کا کہنا ہے کہ ہفتہ کو بھی مکہ اور جدہ میں بارش ہو گی۔

جواب چھوڑیں