تاج محل میں صرف نماز جمعہ ادا کی جائے گی‘اے ایس آئی کا نوٹس

ہندوستانی محکمہ آثار قدیمہ سروے( اے ایس آئی) نے تاج محل کے گیٹ پر ایک نوٹس چسپاں کرتے ہوئے کہا ہے کہ صرف جمعہ کو ہی تاج محل میں لوگ نماز ادا کرسکتے ہیں۔ اِس نوٹس کو مرکزی حکومت کی طرف سے کافی پہلے جاری کیا گیا تھا لیکن اب یہ تاج محل کے مغربی دروازے پر چسپاں کیا گیا ہے۔ تاج محل میں جمعہ کے علاوہ دیگر دنوں میں بھی نماز ادا کرنے کی اجازت دیئے جانے کا مطالبہ ہوتا رہا ہے لیکن محکمہ آثار قدیمہ نے اِس پر پابندی لگادی ہے۔ محکمہ آثارقدیمہ اب جمعہ کے دن ہی تاج محل میں نماز ادا کرنے کی اجازت دے رہا ہے۔ گذشتہ منگل کو پانچ افراد نے تاج محل میں نماز ادا کی تھی۔ اس کے بعد اے ایس آئی نے یہ نوٹس چسپاں کی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ صرف جمعہ کو ہی تاج محل میں نماز ادا کی جاسکتی ہے۔ اِس سلسلہ میں رواں سال جولائی میں سپریم کورٹ کا بھی حکم آیا تھا۔ عدالت عظمیٰ نے آگرہ سے باہر کے لوگوں کیلئے تاج محل میں نماز ادا کرنے پر پابندی لگادی تھی۔ اس ِسلسلہ میں تاج محل کے انچارج انکت نامدیو نے بتایاکہ مشہور یادگار کے مغربی دروازے پر گزٹ نوٹیفکیشن چسپاں کیا گیا ہے جس میں واضح طورپر لکھا ہے کہ یادگار کے احاطہ میں واقع مسجد میں صرف جمعہ کے روز دوپہر 12بجے سے دوبجے تک نماز ادا کی جاسکے گی۔

جواب چھوڑیں